سعودی عرب میں یومیہ 70 ملین ریال کا کھانا ضائع ہوتا ہے: سماجی ذرائع

سعودی عرب میں یومیہ 70 ملین ریال کا کھانا ضائع ہوتا ہے: سماجی ذرائع
سعودی عرب میں یومیہ 70 ملین ریال کا کھانا ضائع ہوتا ہے: سماجی ذرائع

  

ریاض(آن لائن) سعودی عرب کی سماجی تنظیم ’’خیرات‘‘ کی چیئرپرسن نورہ العجمی نے کہا ہے کہ ملک میں روزانہ 70 ملین ریال کی خوراک ضائع کی جا رہی ہے اور کھانا ضائع کرنے والے ممالک میں سعودی عرب پہلے نمبر پر ہے۔

ایودھیا میں صرف مندر ہی تعمیر ہونا چاہئے: موہان بھگوات

العریبیہ نیوز کے مطابق سعودی عرب کی سماجی تنظیم ’’خیرات‘‘ کی چیئرپرسن نے ریاض میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب میں روزانہ 70 ملین ریال کی خوراک ضائع کی جا رہی ہے جن میں سب سے زیادہ بوفے والے کھانا شامل ہے۔انھوں نے کہا کہ تقریبات میں ذبح کئے جانے والے جانور پھینک دیے جاتے ہیں اور ضائع شدہ خوراک اتنی ہوتی ہے کہ ریاض کے پورے باشندے سیر ہوکر کھا سکتے ہیں۔ چیئرپرسن نے کہا کہ مذکورہ اعدادوشمار عالمی تنظیم فا کے جاری کردہ ہیں اور سعودی عرب کے 90 فیصد گھروں کے لوگ روزانہ بچ جانے والی خوراک باہر پھینک دیتے ہیں۔

مزید : عرب دنیا