حکومت شہریوں کو سستی اورمعیاری طبی سہولیات فراہم کرے، اعجاز الحق

    حکومت شہریوں کو سستی اورمعیاری طبی سہولیات فراہم کرے، اعجاز الحق

  



ہارون آباد(نامہ نگار)سربراہ مسلم لیگ (ضیاء) محمد اعجاز الحق نے کہا ہے کہ صحت کی بہتر سہولیات حکومت کی ذمہ داری ہے کہ وہ شہریوں کو علاج معالجے کی سستی اور معیاری سہولتیں فراہم کرے(بقیہ نمبر45صفحہ12پر)

،یہ باتیں انہوں نے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال ہارون آباد کے وزٹ پر کیں، اس موقع پر ایم ایس ڈاکٹر نعیم عطاء، چودھری شہباز و دیگر بھی موجود تھے،انہوں نے کہا کہ ریاست کا بنیادی فرض ہے کہ وہ اپنے تمام شہریوں کو بلاامتیاز مذہب، جنس،ذات، عقیدہ اور نسل زندگی کی بنیادی ضرورتوں بشمول صحت اور علاج ومعالجہ کی سہولتوں کو یقینی بنائے، ہمارے دور حکومت میں تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں عوام کو علاج کی جدید سہولیات فراہم کی گئیں جس میں کڈنی ڈائلسز یونٹ کا قیام منہ بولتا ثبوت ہے۔موجودہ حکومت عوام کو صحت کی بہترین سہولیات فراہم کرنے کی طرف بھی توجہ دے۔

بوگس چیک کیس:25مقدمات کافیصلہ

ملتان ( خبر نگار خصو صی) چیف جسٹس پاکستان کے حکم پر بنائی جانے والی ماڈل ٹرائل مجسٹریل کورٹ ملتان کے جج رانا محمد سہیل ریاض نے کئی سال سے فیصلے کے منتظر بوگس چیک کے مزید (بقیہ نمبر46صفحہ12پر)

25 مقدمات کا گزشتہ روز فیصلہ کردیا اور متاثرہ افراد کو لاکھوں روپے کی ادائیگیاں کرادی ہیں۔ فاضل عدالت میں اب صرف 25 بوگس چیک کے مقدمات زیر سماعت ہیں۔یاد رہے کہ ماڈل عدالت نے اب تک 138 بوگس چیک کے مقدمات کا فیصلہ کرکے متاثرہ لوگوں کو کروڑوں روپے کی ادائگیاں کرائی ہیں۔جس پر ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ملتان سہیل اکرام نے ماڈل کورٹ کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے اسے جاری رکھنے کی ہدایت کی ہے۔بوگس چیک کے مقدمات کا جلد فیصلہ کرانے کے لیے یہ کورٹ 15 اکتوبر کو قائم کی گئی تھی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر