بجلی بلوں میں اضافی ٹیکس، کاشتکاروں کا وہاڑی میں مظاہرہ، دھرنا

      بجلی بلوں میں اضافی ٹیکس، کاشتکاروں کا وہاڑی میں مظاہرہ، دھرنا

  



وہاڑی(بیورورپورٹ+نمائندہ خصوصی)بجلی بلوں میں ناجائز ٹیکسز کے خلاف پاکستان کسان اتحاد کے سینکڑوں کارکنان نے واپڈا کمپلیکس کے سامنے احتجاجی دھرناتفصیلات کے مطابق پاکستان کسان اتحاد کے سینکڑوں کارکنان نے واپڈا حکام کی جانب سے کسانوں کے بجلی بل ادا نہ کرنے پر میٹر کاٹنے کے خلاف مین ملتان روڈ پر احتجاجی دھرنا دے دیا احتجاجی دھرنا کی قیادت ضلعی صدر افتخار احمد چوہدری،ضلعی چیئرمین مہر اکمل،ضلعی جنرل سیکرٹری چوہدری اکرم کمبوہ نے کی احتجاجی مظاہرین میں قاضی (بقیہ نمبر18صفحہ12پر)

محمد نواز، چوہدری اقبال یوسف، غلام حسین مہہ، میاں ناصر، مہر ارشد،چوہدری اکرم شاد، غلام رسول کمبوہ،راشد اسحاق، اسد ریاض، اویس رحیم چوہدری، جاوید اشرف وڑائچ، حاجی بشیر احمد بھٹی،محمد عثمان ملوکا،چوہدری زبیر اختر،اسد ریاض،فوجی صادق،یعقوب گرواہ،ذوالفقار چوہدری سمیت سینکڑوں کسان اتحاد کارکنان موجود تھے مظاہرین نے ملتان روڈ پر دریاں بچھاکر روڈ بند کردیا جس سے ٹریفک کی آمدورفت شدید متاثر ہوئی احتجاجی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے ضلعی چیئرمین مہر اکمل ایڈووکیٹ نے کہا کہ بجلی بلوں میں ایف پی آر اور کیو ٹی آر ڑیکسز شامل کرنا کسانوں کے ساتھ ناانصافی ہے کسان ناجائز ٹیکسز والے بل ہرگز ادا نہیں کریں گے ضلعی صدر افتخار احمد چوہدری نے کہا کہ واپڈا حکام کسانوں کے ساتھ ظلم و زیادتی کررہے ہیں اگر آدھے گھنٹے میں مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو کسان واپڈا دفتر میں داخل ہوجائیں گے کسانوں نے اپنے مطالبات کے حق میں بھرپور نعرے بازی کی جبکہ کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نپٹنے کیلئے پولیس کی نفری بھی واپڈا کمپلیکس کے باہر موجود رہی کسان اتحاد کا دھرنا کئی گھنٹے جاری رہا کسانوں کی واپڈا حکام کے خلاف شدید نعرے بازی جاری رہی آخری اطلاعات تک انتظامیہ،واپڈا اور کسان اتحاد کے درمیان مذاکرات جاری تھے۔

دھرنا

مزید : ملتان صفحہ آخر