فضل الرحمن ناکام دھرنے کے بعد اے پی سی پر آ گئے،ہمایوں اختر

فضل الرحمن ناکام دھرنے کے بعد اے پی سی پر آ گئے،ہمایوں اختر

  



لاہور (نمائندہ خصوصی) تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما و سابق وفاقی وزیر ہمایوں اختر خان نے کہاہے کہ مولانا فضل الرحمان مارچ اور دھرنے کی ناکامی کے بعد دوبارہ اے پی سی پر آ گئے ہیں جس سے واضح ہے کہ اقتدار سے دوری انہیں کتنا بے چین کئے ہوئے ہے،اپوزیشن کے اکٹھ کا صرف دو رکنی ایجنڈا کرپشن اور اپنی سیاست بچاؤ ہوتا ہے، ہم نہیں چاہتے کہ اپوزیشن آئندہ عام انتخابات میں مقابلے کی دوڑ سے باہر ہو لیکن یہ خود اسی جانب سفر جاری رکھے ہوئے ہے۔

ان خیالات کا اظہارانہوں نے پنجاب کے مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے پارٹی رہنماؤں کے وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ ہمایوں اخترخان نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری پر امریکی عہدیدار کے بیان پر پاکستان اور چین کی جانب سے رد عمل ظاہر کر دیا گیا ہے۔پاکستان میں ساز گار ماحول کی وجہ سے غیر ملکی سرمایہ کاری میں اضافہ ہو رہا ہے جس کا کریڈٹ موجودہ حکومت کی مثبت پالیسیوں کو جاتاہے۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ(ن) نے سوچے سمجھے منصوبے کے تحت جاتے ہوئے معیشت کے ساتھ ایسا کھلواڑ کیا تاکہ آنے والی حکومت مشکلات سے باہر نہ آ سکے لیکن وزیراعظم عمران خان نے اپنے عزم اور دور اندیشی سے پاکستان کوخطرات سے باہر نکالا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے تسلیم کیا ہے کہ مہنگائی ہے اور اس کے تدارک کیلئے اقدامات بھی اٹھائے گئے ہیں، عوام کا استحصال کرنے والوں کو گرفت میں لانے کے لئے عملی اقدامات اٹھا رہے ہیں۔سابقہ

 حکمرانوں نے جو بیگاڑ پیدا کئے ہیں انہیں راتوں رات نہیں ٹھیک کیا جا سکتا لیکن وزیر اعظم عمران خان ایک پل کے لئے بھی غافل نہیں۔ 

مزید : میٹروپولیٹن 1