عمران طاہرپی ایس ایل میں صلاحیتوں کااظہار کرنے کیلئے بے تاب

عمران طاہرپی ایس ایل میں صلاحیتوں کااظہار کرنے کیلئے بے تاب

  



لاہور(آئی این پی)جنوبی افریقہ کے سپنر  عمران طاہر پی ایس ایل میں صلاحیتوں کا اظہار کرنے کیلئے بے تاب ہیں، پاکستانی نژاد جنوبی افریقی لیگ اسپنر کا کہنا ہے کہ انٹرنیشنل ذمہ داریوں کی وجہ سے گذشتہ ایڈیشن کا حصہ نہیں بن سکا،اس بار اگر منتخب ہوا تو بہترین کارکردگی دکھانے کی کوشش کروں گا۔اپنے ایک انٹرویو میں عمران طاہر نے کہا کہ میں اپنی انٹرنیشنل مصروفیات کی وجہ سے رواں برس پاکستان سپر لیگ میں شرکت نہیں کر سکا تھا،اس بار مکمل ایونٹ کیلیے دستیاب ہوں، اگر منتخب ہوا تو بہترین کارکردگی دکھانے کی کوشش کروں گا۔پاکستان نژاد جنوبی افریقی اسپنر نے کہا کہ پی ایس ایل میں کرکٹ کا معیار بلند اور اس کا شمار دنیا کی سرفہرست لیگز میں ہوتا ہے، پاکستانیوں کی بھرپور سپورٹ اسے حاصل ہوتی ہے، باصلاحیت ڈومیسٹک کرکٹرز کی موجودگی میں یہاں بولنگ کرنا اور کارکردگی دکھانا آسان نہیں ہوتا، میں دنیا کی مختلف لیگز کھیل رہا ہوں۔ آئندہ سال ہونے والے ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ میں جنوبی افریقہ کی نمائندگی کرنے کی خواہش ہے۔ایک سوال پرعمران طاہر نے کہا کہ پاکستان میں کھیلتے ہوئے بہترین مہارت حاصل کی،آج جو بھی ہوں اسی وجہ سے ہوں، 2004-5کے سیزن میں پرفارمنس اچھی تھی لیکن پاکستان کرکٹ میں بڑے نام ہونے کی وجہ سے قومی ٹیم میں جگہ بنانا ممکن نہیں تھا۔

 ،جنوبی افریقہ گیا تو واپسی کا موقع تھا، تقدیر میں یہی لکھا تھا کہ پروٹیز کی جانب سے کھیلوں۔عمران طاہر نے کہاکہ عبدالقادر میرے لیے والدکی طرح تھے،میں ان کے بہت قریب تھا، انتقال کا سن کر بڑا دھچکا لگا،سابق لیگ اسپنر نے مجھے بولنگ کے گر سکھائے جس پر زندگی بھر شکر گزار رہوں گا، عبدالقادر کی دنیا سے رخصتی سب کیلیے ایک بڑا صدمہ تھی،ان جیسا کوئی بولر دوبارہ نہیں آئے گا۔ کبڈی ورلڈ کپ 2020، کھلاڑیوں کی تربیتی کیمپ میں بھرپور تیاری، لنگوٹ کس لیے

مزید : کھیل اور کھلاڑی