باڑہ،ضلع خیبر میں قبائلی عوام کا پشاور پولیس کیخلاف احتجاج

باڑہ،ضلع خیبر میں قبائلی عوام کا پشاور پولیس کیخلاف احتجاج

  



باڑہ(نمائندہ پاکستان)ضلع خیبر میں قبائلی عوام کا پشاور پولیس کے خلاف احتجاج،ہمارا کیس سپریم کورٹ میں چل رہی ہے فیصلہ آنے تک پولیس قبائلی علاقوں میں مداخلت نہ کریں۔قبائل تحفظ مومنٹ ضلع خیبر تحصیل باڑہ گزشتہ روز باڑہ میں پشاور پولیس ضلع خیبر کے خاصہ دار اور لیویز فورس کو اعتماد میں لیے بغیر دکانوں پر چھاپہ مارا تھا جس پر پورے باڑہ تحصیل کے عوام میں غم وغصہ پایا گیا اور آج تحصیل باڑہ میں تاجروں اور قبائل تحفظ مومنٹ نے پورے باڑہ میں احتجاج شروع کیا جس میں ہزاروں کے تعداد میں تاجروں نے شرکت کی احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہو ئے مقررین نے کہا کہ سابقہ فاٹا کی کیس کورٹ میں چل رہی ہے جب تک فیصلہ سامنے نہیں آتا پشاور پولیس ہمارے علاقوں میں مداخلت نہ کریں۔ انہوں نے کہاکہ باڑہ میں پولیس گردی، بغیر خیبر پختوانحواہ خیبر خاصہ داراور لیویز فورس کے باڑہ میں دکانوں کے تالے توڑ کر لوٹ مار کرنے سے عوام میں سخت مایوسی،غم وغصے کی لہر دوڑ گئی جس پر پورے باڑہ تحصیل کے عوام اور باڑہ تاجران سڑکوں پر نکل آئے ہیں۔مظاہرین نے دو گھنٹے تک باڑہ خیبرچوک بین الااقوامی شاہرہ ہرقسم امدو رفت کیلئے بند کیاتھا جس پر ڈی ایس پی باڑہ مظہر، ڈی ایس پی نواز اور ایس ایچ او باڑہ اکبر افریدی نے تاجریونین مشران اور قبائل تحفظ مومنٹ کے مشران کے ساتھ مذاکرات شروع کرکے ڈی پی او خیبر اور ائی جی خیبر پختوانحواہ پولیس کے ساتھ مذاکرات کیلئے چند رکنی کمیٹی تشکیل دی اور پشاور پولیس کی باڑہ کے حدود میں بغیر مقامی پولیس کے مداخلت کی یقین دہانی کرائی جس پر احتجاج ختم کردیا گیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر /ملتان صفحہ آخر