مردہ خانے کے ملازم نے لاش کی ٹانگ پر کٹ لگایا تو ’مردہ‘ چیختا ہوا اُٹھ کر بیٹھ گیا، انوکھا ترین واقعہ

مردہ خانے کے ملازم نے لاش کی ٹانگ پر کٹ لگایا تو ’مردہ‘ چیختا ہوا اُٹھ کر ...
مردہ خانے کے ملازم نے لاش کی ٹانگ پر کٹ لگایا تو ’مردہ‘ چیختا ہوا اُٹھ کر بیٹھ گیا، انوکھا ترین واقعہ

  

نیروبی(مانیٹرنگ ڈیسک) افریقی ملک کینیا میں ایک آدمی کو ڈاکٹروں نے مردہ قرار دے دیا، مگر وہ تین گھنٹے بعد ایسے وقت پر ہوش میں آ گیا کہ سن کر ہی آدمی کے اوسان خطا ہو جائیں۔ میل آن لائن کے مطابق اس 32سالہ آدمی کا نام پیٹر کیجن بتایا گیا ہے جو اپنے گھر میں بے ہوش ہو کر گر گیا تھا جس پر اسے فوری طور پر کیپکاتیت ہسپتال لیجایا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دے دیا۔ 

رپورٹ کے مطابق اس کے تین گھنٹے بعد جب اس کی لاش مردہ خانے پہنچائی گئی اور مردہ خانے کے عملے نے لاش کو محفوظ کرنے کے لیے اسے گہرے کٹ لگانے شروع کیے تو آدمی فوراً ہوش میں آ گیا۔ بتایا گیا ہے کہ عملے نے ابھی اس کی دائیں ٹانگ پر ہی کٹ لگایا تھا کہ وہ ہوش میں آ گیا اور ٹانگ پر لگنے والے کٹ کی وجہ سے ہونے والی تکلیف کے سبب چیخ و پکارکرنے لگا۔اسے ہوش میں آتے دیکھ کر مردہ خانے کے عملے کے لوگ خوفزدہ رہ گئے۔ اسے ایک بار پھر ہسپتال پہنچایا گیا۔ جہاں اس کا علاج جاری ہے اور اس کی حالت مستحکم بتائی جا رہی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -