ملتان کا جلسہ ہو گا یا نہیں؟اپوزیشن رہنماؤں کو کورونا کا خطرہ

ملتان کا جلسہ ہو گا یا نہیں؟اپوزیشن رہنماؤں کو کورونا کا خطرہ
ملتان کا جلسہ ہو گا یا نہیں؟اپوزیشن رہنماؤں کو کورونا کا خطرہ

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)حکو مت مخالف اپوزیشن جماعتوں پر مشتمل اتحاد پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ کا  ملتان میں تیس نومبر کو  جلسہ ہوگا یا نہیں؟اس حوالے سے چہ مگوئیوں شروع ہو گئیں جبکہ اپوزیشن رہنماؤں کو بھی کورونا کا خدشہ لاحق ہوگیا ہے کیونکہ پشاور جلسے کے بعد پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کورونا کا شکار ہوئے اور اب اے این پی کی صوبائی ترجمان  ثمر ہارون بلور کا بھی کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے جس کے بعد پشاور جلسے میں شریک ہونے والے اپوزیشن رہنماؤں میں تشویش پھیل گئی ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹوزرداری کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد اے این پی کی رہنما ثمر ہارون بلور کا کورونا ٹیسٹ بھی مثبت آگیا ہے۔ اپوزیشن رہنماؤں کو پشاور کا جلسہ مہنگا پڑ گیا۔پشاور جلسےکے بعد چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کورونا کا شکار ہوئے تھے اور اب اے این پی رہنما ثمر ہارون بلور کا بھی کورونا ٹیسٹ مثبت آیا ہے۔ثمر ہارون بلور پشاور جلسے میں کافی پیش پیش تھیں اور وہاں جمع ہونے والی اپوزیشن قیادت کی میزبانی میں بھی ثمر ہارون بلور سب سے آگے تھیں،ثمر ہارون بلور پشاور جلسے میں اپوزیشن رہنماؤں کے ہمراہ سٹیج پر موجود تھیں جبکہ انہوں نے مریم نواز کے ساتھ معانقہ بھی کیا تھا جبکہ بلاول بھٹو زرداری بھی اپوزیشن جماعتوں کے رہنماؤں کے ساتھ گھل مل گئے تھے۔پشاور جلسے سے پہلے اور بعد میں منعقدہ تقریب میں موجود رہنما ایک دوسرے سے گلے ملتے اور خوش گپیوں میں مگن رہے۔تقریب میں محموداچکزئی،امیر مقام،علامہ ساجد میر اور دیگر رہنما بھی شریک تھے۔بلاول بھٹو زرداری نے مولانا فضل الرحمان سے بھی معانقہ کیا تھا جس کی وجہ اپوزیشن رہنماؤں میں کورونا کے حوالے سے تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔ 

دوسری جانب اس پر ردعمل دیتے ہوئے فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ مریم نوازکا کورونا ٹیسٹ ہوناچاہیے، ان لوگوں نےمذاق بنا دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ دادی کی وفات پر بھی یہ لوگ سیاست کررہے ہیں ،شہبازشریف نے جنازہ سے ایک دن پہلے کی پیرول درخواست دی تھی۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -