محرم میں ماضی کی نسبت سیکیورٹی کے بہتر انتظامات کئے جائیں،اقبال چنڑ

محرم میں ماضی کی نسبت سیکیورٹی کے بہتر انتظامات کئے جائیں،اقبال چنڑ

  

لاہور( خبرنگار) صوبائی وزیر کوآپریٹوملک محمد اقبال چنڑ نے محرم الحرام کے سلسلے میں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملک کٹھن دور سے گزر رہا ہے دہشت گردی اور انتہاپسندی نے ملک کی بنیادوں کو ہلا کر رکھ دیا ہے امن کے دشمن ملک کی سالمیت کو نقصان پہنچانے کے درپے ہیں ان حالات میں ضرورت اس امر کی ہے کہ ملک دشمن عناصر کے مذموم عزائم کو خاک میں ملانے کیلئے پوری قوم متحد ہو جائے اور امن عامہ پر خصوصی توجہ دی جائے امن و امان کا قیام اولین ترجیح ہے محرم الحرام کے دوران سکیورٹی انتظامات گزشتہ برسوں سے بڑھ کر کئے جائیں اور عوام کے جان و مال کے تحفظ کیلئے کوئی کسر اٹھا نہ رکھی جائے صوبے بھر میں وضع کردہ جامع سکیورٹی پلان پر عملدرآمد یقینی بنایا جائے

 انہوںنے کہا کہ موجودہ حالات ہنگامی اور فول پروف انتظامات کے متقاضی ہیں لہٰذا محرم الحرام کی آمد کے پیش نظر تمام متعلقہ ادارے کمربستہ ہو جائیں اور قیام امن کو یقینی بنانے کیلئے اپنی تمام تر توانائیاں بروئے کار لائیں مجالس اور جلوسوں کی حفاظت کیلئے وضع کردہ سکیورٹی پلان پر مکمل عملدرآمد یقینی بنایا جائے حساس مقامات کی خصوصی نگرانی کی جائے مساجد ، امام بارگاہوں اور دیگر عبادت گاہوں پر پولیس کی اضافی نفری تعینات کی جائے انہوں نے ہدایت کی کہ اشتعال انگیز مواد اور لٹریچر پر پابندی کے قانون پر سختی سے عملدرآمد کرایا جائے۔ خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جائے اسلحہ کی نمائش پر پابندی کے قانون پر موثر انداز میں عملدرآمد کرایا جائے اشتعال انگیز تقاریر اور وال چاکنگ کرنے والوں کے خلاف بلاامتیاز سخت کارروائی کی جائے انہوں نے کہا کہ جلوسوں کے روٹس اور مقررہ اوقات کی پابندی کو ہر قیمت پر یقینی بنایا جائے۔

۔

۔

 روٹس پر سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے جائیں۔ واک تھرو گیٹس، جنریٹرز، لائٹس اور دیگر ضروری اشیاءکا بھی بندوبست کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ متعلقہ ادارے مربوط انداز میں کام کریں۔ مشتبہ افراد پر کڑی نظر رکھی جائے اور کمیونیکیشن کے متبادل ذرائع کے انتظامات مکمل ہونے چاہئیں۔ انہوں نے کہا کہ علماءکرام اور مشائخ عظام منبر رسول سے بھائی چارے، باہمی یگانگت اور تحمل و برداشت کا درس دیں کیونکہ یہ وقت اتحاد اوراتفاق کا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ڈویژنل ، ضلعی اور تحصیل کی سطح پر امن کمیٹیوں کے اراکین متحرک انداز میں فرائض سرانجام دیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -