پاکستان میں انسداد پولیو پروگرام بستر مرگ پر پڑا ہے،عالمی پولیو مانیٹر

پاکستان میں انسداد پولیو پروگرام بستر مرگ پر پڑا ہے،عالمی پولیو مانیٹر

  

جنیوا(خصوصی رپورٹ) عالمی پولیو مانیٹر نے کہا ہے کہ یہ ایک افسوسناک حقیقت ہے کہ 2014 کے اختتام تک دنیا بھر سے پولیو کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہو سکے گا کیونکہ پولیو کے خاتمے کی راہ میں حائل سب سے بڑی رکاوٹ پاکستان ہے اور یہاں انسداد پولیو پروگرام بستر مرگ پر پڑا ہے جس کے دیکھ بھال کے لئے کوئی مناسب اقدامات نہیں کئے جا رہے۔ عالمی آزاد پولیو مانیٹر نے اقوام متحدہ کے ادارے یونیسیف کو لکھے گئے تازہ ترین مراسلے میں درخواست کی ہے پاکستان پر پریشر ڈلا جائے کہ وہ پولیو پروگرام کی بہتری کے لئے بھیجی جانے والی سفارشات پر عمل کو یقینی بنائے کیونکہ اگر پاکستان پولیو کے خاتمے میں ناکام رہا تو مزید اربوں ڈالر لگا کر بھی اس بیماری کو خاتمہ ممکن نہیں رہے گا۔واضح رہے عالمی پولیو مانیٹر کی جانب سے گزشتہ روز پاکستان میں انسداد پولیو کی مہم کی ناکامی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے سفارش کی گئی تھی کہ پاکستان میں اس پروگرام کو محکمہ صحت کی بجائے این ڈی ایم اے کے ماتحت کیا جائے۔

پولیو مانیٹر

مزید :

صفحہ اول -