امریکی پیشکش مسترد،بھارت ٹینک شکن میزائل ا سرائیل سے خریدے گا

امریکی پیشکش مسترد،بھارت ٹینک شکن میزائل ا سرائیل سے خریدے گا

  

نئی دہلی(اے این این)بھارتی حکومت نے امریکہ کی پیشکش مسترد کرتے ہوئے ٹینک شکن میزائل اسرائیل سے خریدنے کا فیصلہ کرلیا، معاہدے کے تحت 8,356 سپائیک میزائل اور 321 میزائل لانچر خریدے جائینگے جن کی کل مالیت 32 ارب روپے بنتی ہے۔فرانسیسی خبررساں ایجنسی نے بھارتی سرکاری حکام کے حوالے سے بتایا ہے کہ حکومت نے فوج کو جدید بنانے کے لیے کئی منصوبوں کی منظوری دی ہے جن میں اسرائیل کے ساتھ 13.1 ارب ڈالر کے میزائلوں کا سودا بھی شامل ہے۔بھارتی وزارتِ دفاع کے ذرائع کے مطابق مذکورہ معاہدے کے تحت مودی حکومت اسرائیل سے 8,356 سپائیک میزائل اور 321 میزائل لانچر خریدے گی جن کی کل مالیت 32 ارب روپے ہوگی۔بھارت وزارت دفاع کے ایک دوسرے سینیئر افسر نے اے ایف پی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ کونسل نے اسرائیلی میزائل کی خریداری کا فیصلہ سراسر تکنیکی بنیادوں پر کیا ہے اور ہم نے صرف اعداد و شمار کو مد نظر رکھا۔خبررساں ادارے کے مطابق اسرائیل سے میزائلوں کی خریداری کے معاہدے کی باقاعدہ منظوری گزشتہ روز وزارت دفاع کی دفاعی خریداری کونسل کے اجلاس میں دی گئی جس کی صدارت وزیر دفاع ارون جیٹلی نے کی۔ اس اجلاس میں کل 800 ارب روپے مالیت کے اسلحے کے کئی منصوبوں کی منظوری دی گئی۔سپایئک میزائلوں کی بڑی خصوصیت یہ ہے کہ اسے چلانے کے لیے آپ کا نشانہ باز ہونا ضروری نہیں کیونکہ یہ اپنے نشانے کو لاک کر لیتا ہے اور اس کا پیچھا کر کے اسے تباہ کر دیتا ہے۔اسرائیل کے مقابلے میں امریکہ سے جیولن میزائل خریدنے کی پیشکش بھی موجود تھی۔

ٹینک شکن

مزید :

صفحہ اول -