حکومت تحریک انصاف کے استعفے کچھ وقت کے لیے زیر غور رکھے تو بہتر ہو گا : سراج الحق

حکومت تحریک انصاف کے استعفے کچھ وقت کے لیے زیر غور رکھے تو بہتر ہو گا : ...

  

               لاہور(اے این این)امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ محرم الحرام ہمیں قربانی اور ایثار کا درس دیتا ہے،انتشار اور ٹکراﺅکا نہیں ،یہ درست ہے کہ اسلام کے دشمن ہمیں رنگ ،نسل،اور فرقوں کی بنیاد پر تقسیم کرنے کیلئے سازشوں کا جال بچھارہے ہیں،لیکن افسوس کی بات ہے کہ مسلمان کیوں دانستہ اور نادانستہ طور پر دشمن کے ہاتھوں میں کھیلنے کیلئے تیار رہتے ہیں ،حضرت عمر فاروق ؓ کا دور حکومت ان کی انتظامی صلاحیتوں کا منہ بولتا ثبوت ہے،اور دور فاروقی ضرب المثل بن چکا ہے ،حکومت اور پی ٹی آئی کے درمیان ڈیڈ لاک ختم ہونا ضروری ہے سپیکر قومی اسمبلی نے استعفوں کے حوالے سے بہتر کردار ادا کیا ہے ۔ پی ٹی آئی کے ممبران کے استعفے کچھ وقت کیلئے زیر غور رکھیں تو بہتر ہوگا ۔27اکتوبر کو شاہ محمود قریشی کی قیادت میں پی ٹی آئی کا وفد جماعت اسلامی کے مرکزی دفتر منصورہ لاہور آرہا ہے جس میں حکومت پی ٹی آئی ڈیڈ لاک ختم کرنے پر بات ہوگی،سیاسی مسائل سیاسی طریقوں سے ہی حل ہوسکتے ہیں ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اتوار کے روز المر کز الاسلامی میں ایک ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر جماعت اسلامی کے صوبائی امیر پروفیسر محمد ابراہیم خان ،صوبائی سیکرٹری اطلاعات اسرار اللہ ایڈوکیٹ ،جماعت اسلامی ضلع پشاور کے امیر صابر حسین اعوان اور جماعت اسلامی فاٹا کے ترجمان شاہ جہان آفریدی بھی موجود تھے ۔سراج الحق نے کہا کہ حضرت عمر فاروق کا دور خلافت مسلمانوں کی تاریخ کا سنہری دور تھا اور ان کے دور میں ریاست کے مختلف اداروں کی جس انداز میں تنظیم کی گئی وہ انکی انتظامی صلاحیتوں کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ عدل فاروقی ضرب المثل بن چکا ہے ان کے دور میں عدل اور انساف کے حصول کو آسان اور ارزاں بنایا گیا ۔

سراج الحق

مزید :

صفحہ اول -