’امریکہ پر بڑا ایٹمی حملہ ہونے والا ہے جس سے خوفناک تباہی برپاہوگئی‘ بڑی پیشنگوئی سامنے آگئی

’امریکہ پر بڑا ایٹمی حملہ ہونے والا ہے جس سے خوفناک تباہی برپاہوگئی‘ بڑی ...
’امریکہ پر بڑا ایٹمی حملہ ہونے والا ہے جس سے خوفناک تباہی برپاہوگئی‘ بڑی پیشنگوئی سامنے آگئی

  

دمشق(مانیٹرنگ ڈیسک) ایک سابق امریکی نیوی افسر نے داعش کے متعلق ایک ایسی پیش گوئی کر دی ہے کہ امریکیوں کی نیندیں اڑ گئی ہیں۔امریکی آرگنائزیشن ”نیشنل رائفل ایسوسی ایشن“ نے ایک ویڈیو شیئر کی ہے جس میں کئی ماہرین کے تجزیئے شامل ہیں۔ اس میں سابق نیوی افسر نے پیش گوئی کی ہے کہ شام و عراق میں برسرپیکار شدت پسند تنظیم امریکہ پر ایک ہولناک حملہ کرنے جا رہی ہے جس سے ملک تباہ ہو جائے گا۔یہ حملہ ایٹمی حملے سے بھی زیادہ خطرناک ہوگا۔ ویڈیو میں دیگر ماہرین نے بھی خدشات کا اظہار کیا ہے کہ وہ امریکی الیکشن سے قبل ملک میں خوفناک واقعات کی ایک سیریز دیکھ رہے ہیں۔

’ہم سے کتوں جیسا سلوک نہ کرو، جب تک میں اقتدار میں ہوں میرے ملک سے کسی قسم کے معاہدے کی توقع بھی نہ کرنا‘ امریکہ کے بڑے اتحادی ملک کے سربراہ نے ایسی بات کہہ دی جو امریکہ سے پوری دنیا میں کوئی کہنے کی جرأت نہیں کرتا

برطانوی اخبار ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق سابق نیوی افسر اور این آر اے کے تجزیہ کار ڈوم ریسو کا کہنا تھا کہ ”میں داعش کی مستقبل کی منصوبہ بندی کا انکشاف کرنے سے قبل داعش کی طرح ہی سوچ رہا ہوں۔ اگر ہمیں دشمن کو روکنا ہے تو ہمیں دشمن کی طرح ہی سوچنا ہو گا۔ ان کی سوچ ہمارے لیے تکلیف دہ ہو سکتی ہے اور وہ ہمیں احساس دلاتے ہیں کہ ہم کتنے کمزور ہیں لیکن یہ واحد راستہ ہے اس کے حملے سے بچنے کا۔ ہمیں ایک ایسے دشمن کا سامنا ہے جسے ہماری مکمل تباہی سے کم کوئی نتیجہ قبول نہیں۔“

انہوں نے مزید کہا کہ ”داعش امریکہ کو گھٹنے ٹیکنے پر مجبور کرنے کے لیے اس کی کمزوریوں کو نشانہ بنائے گی۔ اگر میں داعش کی جگہ ہوتا تو میں کیا کرتا؟ میں امریکہ کی توانائی ختم کر دیتا۔ داعش بھی ایسی ہی منصوبہ بندی کر رہی ہے جس کے تحت وہ طویل عرصے کے لیے امریکہ کی بجلی بند کر دے گی اور ملک مکمل اندھیرے میں ڈوب جائے گا۔ ایک ہفتے کی بجلی کی بندش کے بعد امریکہ میں خوراک اور پانی تلاش کرنا ناممکن ہو جائے گا اور امریکہ ایک میدان جنگ بن جائے گا۔ “

مزید : بین الاقوامی