نصرت فتح علی خان کی برسی پر دنیا بھر میں 48میوزک کنسرٹ کرینگے،راحت فتح علی

نصرت فتح علی خان کی برسی پر دنیا بھر میں 48میوزک کنسرٹ کرینگے،راحت فتح علی

لاہور(فلم رپورٹر)معروف گائیک استاد راحت فتح علی خاں نے کہا ہے کہ لیجنڈ گائیک استاد نصرت فتح علی خاں کی 20ویں برسی کے موقع پر دنیا کے مختلف ممالک کے شہروں میں عظیم فنکار کوخراج تحسین پیش کرنے لئے 48میوزک کنسرٹس کا انعقاد کیا جائے گا۔جنوری2017میں ان کنسرٹس کا آغاز ان کی جائے پیدائش فیصل آباد سے کیاجائے گاان خیالات کا اظہار انہوں گزشتہ روز مقامی ہوٹل میں فلمسٹار شان شاہد ،میوزک پروموٹر سلمان احمد اور عامر حسن کے ساتھ پریس کانفرنس کے دوران کیا۔استاد راحت فتح علی خاں نے کہا کہ اس سلسلے کا آخری میوزک کنسرٹ لندن میں کیا جائے گا جہاں پر استاد نصرت فتح علی خاں کا انتقال ہوا تھااس آئیڈیا پر تین سالوں سے کام ہورہا ہے اور اس کو 2017ء میں عملی شکل دی جائے گی ان کنسرٹس میں پاکستان کے دیگرنامور فنکاروں کو بھی شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔

میں اس سے قبل بھی متعدد بار استاد نصرت فتح علی خاں کو ٹریبیوٹ پیش کرنے کے لئے کنسرٹس کا انعقاد کرچکا ہوں لیکن اتنے بڑے پیمانے پر ایسا پہلی بار ہورہا ہے ۔ایک سوال کے جواب میں راحت فتح علی خاں نے کہا کہ مجھے پاکستان کی عزت سے زیادہ کچھ عزیز نہیں ہے اگر بھارت کے شہر دہلی میں ہونے والے کنسرٹ کے انعقاد میں کسی قسم کی مشکل پیش آئی تو وہاں پر کنسرٹ کا انعقاد نہیں کیا جائے گا۔انہوں نے یہ بھی کہا کہان کنسرٹس سے ہونے والی آمدنی سے لاہور میں استاد نسرت فتح علی خاں میوزک اکیڈمی قائم کی جا ئے گی جس میں دنیا بھر سے تعلق رکھنے والے اساتذہ موسیقی کی تعلیم دیا کریں گے اس اکیڈمی کے قیام کا مقصد اپنے میوزیکل کلچر کو فروغ دینا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ استاد نصرت فتح علی خان کی یاد میں ہونے والے ان شوزمیں شرکت کے لئے میں نے عاطف اسلم،شفقت امانت علی خان اور عابدہ پروین کو بھی دعوت دی ہے۔اس موقع پر اداکار شان نے کہا کہ نئی نسل کو صوفی میوزک سے روشناس کرانا بہت ضروری ہے کیونکہ استاد نصرت فتح علی خان نے بھی اپنی گائیکی کے ذریعے صوفی ازم کو فروغ دیا اور ان کا یہ مشن ادھورانہیں رہنا چاہیئے۔فلمسٹار شان شاہد نے کہا کہ مجھ سمیت ہر پاکستانی کو استاد نصرت فتح علی خاں پر فخر ہے انہوں نے اپنے ٹیلنٹ کا لوہا پوری دنیا میں منوایا ہمارے ملک میں ٹیلنٹ کی کوئی کمی نہیں ہے میری میڈیا سے درخواست ہے کہ وہ پاکستانی میوزک کو پروموٹ کرنے کے لئے اپنا کردار ادا کریں تمامیڈیا ہاؤسز کو چاہیے کہ وہ ایک ایک میوزک چینل بھی بنائیں تاکہ ہم موسقی کے ثقافتی ورثہ کو آگے بڑھا سکیں۔شان نے مزید کہا کہ صوفی ازم کا پھول پاکستان کے اندرسے کھل سکتا ہے اور یہ ہمارے ملک کے امن اور سلامتی کی دلیل ہے۔لوگوں کومعلوم ہونا چاہیے کہ پاکستان میں صرف سیاسی جلسے ہی نہیں بلکہ کنسرٹ بھی ہورہے ہیں۔اپنی ثقافت اور روایات کو زندہ رکھنا بھی ضروری ہے۔اس ملک کو سیاسی قیادت کے علاوہ فنی قیادت کی ضرورت بھی ہیاس موقع پر استاد نصرت فتح علی خاں اور استاد راحت فتح علی خاں کی فنّی زندگیوں پرمبنی دستاویزی فلمیں بھی دکھائی گئی۔ان دستاویزی فلموں میں دونوں عظیم فنکاروں کے بارے نامور شخصیات کے تاثرات بھی شامل تھے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4