سبزازار سکیم میں غیر قانونی تعمیرات کی بھر مار، راستے بند اہل علاقہ سراپا احتجاج

سبزازار سکیم میں غیر قانونی تعمیرات کی بھر مار، راستے بند اہل علاقہ سراپا ...

لاہور (اپنے نمائندے سے ،اپنے خبر نگار سے)لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے افسران کی مبینہ غفلت اور آپسی ملی بھگت کی وجہ سے ایل ڈی اے کی سبزازار سکیم غیر قانونی تعمیرات کا گڑھ بن گئی ،کیو بلاک کے رہائشی پلاٹ پر مارکیٹ کی تعمیر اور کروڑوں روپے کی رشوت وصولی کی اطلاعات نے چیف ٹاؤن پلانر سمیت دیگر انتظامی افسران کے کردار کو بھی مشکوک کر دیا ،شہریوں کی کثیر تعداد غیر قانونی تعمیرات کے خلاف سراپا احتجاج بن گئی ،ڈی جی ایل ڈی اے سے فوری نوٹس لینے کی اپیل کی گئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایل ڈی اے کی منظوری کے بغیر کیو بلاک میں بااثر افراد نے دھونس اور زبردستی سے تمام بازاروں میں گھروں کے آگے تھڑے اور دوکانیں تعمیر کرکے رہائشیوں کے لئے آنے جانے کے لئے شدید مشکلات کھڑی کر دی ہیں اس کے علاوہ بغیر نقشہ فیس پاس کروائے گھر اور دکانوں کے علاوہ کمرشل پلازوں کی تعمیرات کا سلسلہ بھی جاری ہے ۔ جس کے باعث حکومتی خزانہ اربوں روپے کے ریونیو سے محروم ہورہا ہے ۔ شہری شہریار بٹ،محمد یوسف خان ،سلطان راجہ اور عامر شہزاد نے کہا کہ ہمارے اپنے ذاتی رہائشی گھروں کے راستے ہم پر بند کر دیئے گئے ہیں ،ایل ڈی اے قوانین میں کہاں لکھاہے کہ رہائشی علاقوں میں کمرشل تعمیرات کی جائیں ۔سبزا زار سکیم ایک رہائشی سکیم ہے اس میں کمرشل تعمیرات کی کسی کو بھی کسی سطح پر بھی اجازت نہیں ہے اگر ایل ڈی اے بائی لاز میں رہائشی ڈیکلیئر سوسائٹیوں میں کمرشل پلازوں او ر دکانوں کی تعمیرات کی کوئی شق ہے تو ہمیں بھی دکھائی جائے،سبزازار سکیم کے رہائشی عمر بٹ ،محمد عاقل بٹ،ارسلان علی،احسن جاوید بٹ ،آیان شہریار اور سلیم گوندل نے کہا کہ اس وقت سبزا زار سکیم قبضہ ناجائز قابضین اور غیرقانونی تعمیرات میں ملوث بااثر افراد کا گڑھ بن چکی ہے یہ بات روشن کی طرح عیاں ہے کہ ایل ڈی اے کی حدود میں آنیوالی منظور شدہ اور پرائیویٹ رہائشی سکیموں کے مالکان نے ایل ڈی اے کے بااثر افسران کیساتھ ملی بھگت کرتے ہوئے ناصرف ایل ڈی اے قوانین کی دھجیاں بکھیر کر رکھ دی ہیں بلکہ مورٹ گیج پلاٹس، قبرستان، سکول، پارکس، کمیونٹی سنٹر، مسجد کے لئے مختص کی جانے والی زمین کو بھی غیر قانونی طور پر فروخت کر دیا ہے اور یہی سلسلہ سبزازار سکیم میں دہرایا جارہا ہے ۔رہائشیوں نے ڈی جی ایل ڈی اے سے اپیل ہے کہ سبزازار سکیم میں فوری طور پر غیرقانونی طور تعمیرات اور ان میں ملوث افسران کے خلاف فوری کارروائی کی جائے ۔دوسری جانب چیف ٹاؤن پلانر وسیم احمد خان نے موقف اختیار کرتے ہوئے کہاکہ سبزازار سمیت لاہور کی ترقیاتی سکیموں میں ایل ڈی اے کے اہلکار غیرقانونی کاموں میں ملوث پایا گیا تو اس کے خلا ف سخت تادیبی کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1