سپریم کورٹ کا پلی بارگین کرنیوالے افسران کیخلاف کارروائی کا حکم

سپریم کورٹ کا پلی بارگین کرنیوالے افسران کیخلاف کارروائی کا حکم

اسلام آباد (خصوصی رپورٹ) سپریم کورٹ نے ازخود نوٹس کیس کے تحریری حکم نامے میں کہا ہے کہ نیب قانون کے سیکشن 25 اے کے تحت لوٹی گئی رقم کی رضاکارانہ واپسی کا اختیار بدعنوان عناصر کو کلین چٹ دینے کے مترادف ہے۔سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ اور چیف سیکرٹریز اس قانون سے فائدہ اٹھانے والے افسران کیخلاف فوری کارروائی کریں۔سپریم کورٹ نے نیب سے کرپشن کی رقم رضاکارانہ واپس کرنے کا گذشتہ 10 سال کا ریکارڈ 5 نومبر تک طلب کر لیا ہے۔

مزید : صفحہ اول