اقوام متحدہ میں پریس اتاشی کی تعیناتی کا تنازع شدت اختیار کر گیا

اقوام متحدہ میں پریس اتاشی کی تعیناتی کا تنازع شدت اختیار کر گیا

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)اقوام متحدہ میں پریس اتاشی کی تعیناتی کا تنازعہ شدت اختیار کر گیا ،من پسند فرد کو نوازنے کے لئے با اثر حلقے متحرک ہو گئے ،محکمہ اطلاعات کے افسران میں بد دلی پھیل گئی ۔تفصیلات کے مطابق اقوام متحدہ میں پریس اتاشی کی اہم سیٹ پر جولائی 2013ء میں تعینات ہونے والے مسعود انورکی مدت ملازمت جولائی 2016ء میں پوری ہو ئی تو محکمہ اطلاعات کے کسی قابل افسر کو ان کی جگہ تعینات کرنے کی بجائے عارضی طور پر انہیں تین ماہ کی توسیع دے دی گئی ،جبکہ نیو یارک میں موجود پریس اتاشی عابد سعید کو واشنگٹن سفارتخانے تعینات کردیا گیا ہے ،مسعود انور کا تین ماہ کا کنٹریکٹ رواں ماہ31اکتوبر کو ختم ہو رہا ہے لیکن پھر بھی وزارت خارجہ اور محکمہ اطلاعات ابھی تک اقوام متحدہ میں کسی کو پریس اتاشی تعینات کرنے کا فیصلہ نہیں کر سکی ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ امریکہ میں مقیم پاکستانی حکام چاہتے ہیں کہ اس سیٹ کو پرائیوٹائز کر دیا جائے اور کسی ایسے شخص (صحافی)کو پریس اتاشی مقرر کر دیا جائے جسے انٹر نیشنل میڈیا کو ’’ہینڈل‘‘ کرنے میں کوئی مسئلہ نہ ہو،لیکن ذرائع کا کہنا ہے کہ بات اتنی سادہ بھی نہیں ہے ،وزارت خارجہ اور محکمہ اطلاعات میں بعض ایسے افسران موجود ہیں جو پریس اتاشی کی سیٹ پر اپنے ’’ منظور نظر‘‘ فرد کو ہی دوبارہ کنٹریکٹ دے کر لانا چاہتے ہیں جس کی وجہ سے ابھی تک اس سیٹ پر تعیناتی کا فیصلہ نہیں ہو سکا ۔دوسری طرف محکمہ اطلاعات کے افسران میں اقوام متحدہ میں پریس قونصلر کی ’’ سیٹ ‘‘ کو پرائیوٹائز کرنے اور ’’باہر سے ‘‘ کسی منظور نظر فرد کو تعینات کرنے کی خبروں نے شدید بد دلی پھیلا دی ہے ،محکمہ اطلاعات کے افسران کا کہنا ہے کہ محکمے میں انتہائی قابل اور محنتی لوگوں کی کمی نہیں ہے جو میرٹ کی بنیاد پر اس سیٹ پر تعینات ہونے کے مکمل اہل ہیں لیکن ان کو چھوڑ کر ’’باہر ‘‘سے کسی فرد کو اس سیٹ پر تعینات کرنے سے محکمہ کے قابل افسران پر عدم اعتمادی کا اظہار ہے ،حکومت اور وزارت خارجہ کو چاہئے کہ وہ ایسے لوگوں کی حوصلہ شکنی کرے جو میرٹ کی بجائے من پسند اور منظور نظر افراد کو نوازنے کے لئے میرٹ کا قتل عام کرتے ہیں اور اعلیٰ حکام سے سے معاملے میں نوٹس لینے کی اپیل کی ہے ۔یاد رہے کہ اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے اقوام متحدہ میں مستقل پریس اتاشی کی تعیناتی کیلئے وزارت اطلاعات کو خط لکھا تھا ،جس کی تعیناتی میں تاخیر کی وجہ سے نیویارک میں موجود پریس اتاشی مسعود انور کی مدت ملازمت میں تین ما ہ کی توسیع کردی گئی تھی۔ نئے پریس اتاشی کی تعیناتی تک مسعود انور خدمات سرانجام دیں گے۔ دوسری طرف نیو یارک میں موجود پریس اتاشی عابد سعید کی خدمات کو واشنگٹن سفارتخانے منتقل کردیا گیا ہے،واضح رہے کہ عابد سعید کی نیویارک میں مستقل تعیناتی کی درخواست زیر غور ہے۔

مزید : صفحہ آخر