2نومبر پی ٹی آئی دھرنے سے نمتنے کیلئے پولیس لائن ہیڈ کوارٹر میں تربیتی مشقوں کا آغاز

2نومبر پی ٹی آئی دھرنے سے نمتنے کیلئے پولیس لائن ہیڈ کوارٹر میں تربیتی مشقوں ...

اسلام آباد (وحید ڈوگر سے )2نومبر تحریک انصاف کا دھرنا، پنجاب حکومت کے انکار کے بعد وفاقی پولیس نے سندھ سے مدد لینے پر غور شروع کر دیا باوثوق ذرائع کے مطابق مسائل کا شکار وفاقی پولیس نے وزارت داخلہ کی ہدایت پرپی ٹی آئی دھرنے کے مظاہرین کو منتشر کر نے کی حکمت عملی تشکیل دے دی ہے اور اس سلسلے میں پولیس لائن ہیڈ کواٹر میں تربیتی مشقیں بھی شروع ہیں اور گزشتہ دو روز کے دور چار بیج تربیت کورس کر چکے ہیں دوسری جانب پولیس کے ذمہ دار افسر نے نام نہ ظاہر کرنے کی شرط پر بتایا کہ وزارت داخلہ کی ہدایت کی روشنی میں اسلام آباد کا ریڈزون مکمل طور پر سیل ہو گا اور دھرنے کے شرکا کو راولپنڈی اسلام آباد کے بارڈر فیض آباد کراس کرنے کی اجازات نہیں دی جائیگی ان کا مذید کہناتھا کہ آئی جی اسلام آباد طارق مسعودیاسین کی جانب سے وزارت داخلہ کو لکھے گئے خط پرپنجاب پولیس کی جانب سے لاجسٹک سپورٹ کیلئے کوئی مثبت جواب نہیں دیا گیا لیٹر کے مطابق وفاقی پولیس کی جانب سے نفری کیساتھ ساتھ 20قیدی بسوں اور 10بکتربند گاڑیوں کیلئے راولپنڈی پولیس سے مدد طلب کی لیکن پنجاب پولیس کی جانب سے موجودہ سہولیات دینے سے انکار کر دیا گیا لیٹر کے پیرا گراف نمبر دو میں سندھ حکومت سے بھی مدد پر غور کیلئے لکھا گیا واضع رہے اس سے قبل بھی سندھ کی جانب سے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے اسلام آباد پولیس کو واٹر کین بھیجا گیا تھا جس کو بعد ازاں وقت پر واپس نہ کرنے پر سندھ اور وفاق کے درمیان تنازع کھڑا ہو گیا تھا ۔

مزید : کراچی صفحہ اول