کرپشن کیخلاف سب کو بھرپور جدوجہد کرنا ہوگی،عالیہ رشید

کرپشن کیخلاف سب کو بھرپور جدوجہد کرنا ہوگی،عالیہ رشید

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) آئیے ہم سب مل کر پاکستان کو بچائیں اور کرپشن کے خلاف بھر پور جدوجہد کریں ۔ ڈائریکٹر جنرل نیب (A&P)، عالیہ رشید ،نیب کی کرپشن کے خلاف آگاہی مہم کے متعلق وزارت قومی صحت میں ایک اجلاس منعقد ہوا جس میں دوائیوں اور سگریٹ کے پیکٹ پر کرپشن کے خلاف میسج پرنٹ کرنے کی تجویز پر غور کیا گیا۔ اجلاس کی صدارت سیکرٹری وزارت قومی صحت محمد ایوب شیخ نے کی۔ جس میں وزارت قومی صحت، ڈریپ، ٹوبیکو کنٹرول سیل، سگریٹ اور ادویات بنانے والی کمپنیوں کے نمائندوں نے شرکت کی۔ اس موقع پر ڈائریکٹر جنرل نیب(A&P) عالیہ رشید نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کرپشن کے خاتمے کے لیے ہر شخص کو عملی اقدامات کرنے ہوں گے اور اس سلسلے میں آگاہی پیدا کرنی ہو گی۔ انہوں نے کرپشن کی مختلف اقسام پر روشنی ڈالی اور کہا کہ بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح نے کرپشن کو معاشرے کے لیے زہر قرار دیا تھا اور کہا تھا کہ اس سے آہنی ہاتھوں سے نمٹنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہر پاکستانی کو احساس ہے کہ کرپشن ہی تمام برائیوں کی جڑ ہے۔ جس کی وجہ سے اقربا پروری، شفافیت اور میرٹ کا قتل ہوتاہے۔ انہوں نے کہا کہ نوجوان نسل اس سلسلے میں تبدیلی لانے کے لیے اہم کردار ادا کر سکتی ہے۔ ہمیں نوجوانوں کو آگاہی دینا ہو گی تاکہ اس لعنت کے خلاف جنگ کو جیتا جا سکے۔ اس موقع پر انہوں نے کرپشن کے خاتمے کے حوالے سے بیب کی طرف سے لئے گئے اقدامات پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے کہا کہ "Say NO to Corruption"کا نعرہ ڈائریکٹ بجلی ، گیس اور پانی کے بل، ڈرائیونگ لائسنس، اے ٹی ایم مشین، ریلوے ٹکٹس، ڈاک کے لفافوں، اےئرپورٹس کی سکرین اور بلوچستان اور گلگت بلتستان کے اخبارات میں چھاپے گئے ہیں۔ علاوہ ازیں کہانیوں کے خصوصی کتاب گوگی "Say NO to Corruption"اور ایک رنگ بھرنے والی کتاب پرائمری سطح پر طالبعلموں کے لیے شائع کی گئی ہے۔ اس کے علاوہ "Say NO to Corruption"کا پیغام تمام سینما گھروں میں بھی آویزاں کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئیے ہم سب مل کر پاکستان کو بچائیں اور کرپشن کے خلاف بھر پور جدوجہد کریں۔ معاشرے کے تمام طبقات کرپشن کو جڑ سے اکھاڑیں اور انصاف کا ایسا مضبوط نظام بنایا جائے جسے لوگ کرپشن سے انکار پر اعتماد کر سکیں۔ کرپشن میں ملوث ہونا مادروطن کے لیے مضر ہے لہذا ہمیں کرپشن سے انکار کرنا چاہیے۔ نوجوان ہمارے مستقبل کے نگہبان ہیں۔ انہیں کرپشن ختم کرنے کے لیے سرگرم کردار ادا کرنا چاہیے۔ کرپشن جیسی لعنت پر قابو پانا معاشرے کے ہر شہری بالخصوص نوجوانوں کا فرض ہے۔ مشارورتی اجلاس میں یہ تجاویز پیش کی گئیں کہ سگریٹ کی تمام ڈبیوں پر اور ادویات کے پیکٹ پر "Say NO to Corruption" شائع کیا جائے۔ اس سلسلے میں اجلاس میں موجود فارما کمپنیوں کے نمائندے اور سگریٹ بنانے والی کمپنیوں کے اہلکار موجود تھے۔ جنہیں اس سلسلے میں سفارشات مرتب کرنے کے لیے کہا گیا۔ اس موقع پر سیکرٹری وزارت قومی صحت محمد ایوب شیخ نے نیب کی جانب سے اس مثبت آگاہی کا خیر مقدم کیا اور بتایا کہ ان وزارت شفافیت اور میرٹ کی بالادستی کی پالیسی پر عمل پیرا ہے۔ اس سلسلے میں گذشتہ دوسالوں میں عملی اقدامات کئے گئے ہیں۔ آخر میں سیکرٹری صحت نے اس مہم کے لیے دو کمیٹیوں کی تشکیل کا اعلان کیا۔ جس میں فارما انڈسٹری کے نمائندے اور ڈائریکٹر ڈریپ شامل ہوں گے۔ اس کے علاوہ ٹوبیکو انڈسٹری، ٹوبیکو کنٹرول سیل اور وزارت کے متعلقہ افسران شامل ہوں گے۔ یہ کمیٹیاں "Say NO to Corruption" کا میسج سگریٹ کی ڈبیوں اور دوائیوں کے پیکٹ پر شائع کرنے کی جگہوں کاباہمی اتفاق رائے سے تعین کر کے سیکرٹری وزارت قومی صحت کو دو ہفتے میں اپنی اپنی پورٹ پیش کریں گی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر