شربت گلہ کو بچانے کے لیے نیشنل جیو گرافک میگزین کا فوٹو گرافر میدان میں آگیا

شربت گلہ کو بچانے کے لیے نیشنل جیو گرافک میگزین کا فوٹو گرافر میدان میں آگیا
شربت گلہ کو بچانے کے لیے نیشنل جیو گرافک میگزین کا فوٹو گرافر میدان میں آگیا

  

نیو یارک (مانیٹرنگ ڈیسک )سبز آنکھوں سے شہرت پانے والی شربت گلہ کو بچانے کے لیے نیشنل جیو گرافک میگزین کے فوٹوگرافر سٹیو میک کری میدان میں آگئے ۔شربت گلہ کو گزشتہ روز ایف آئی اے نے غیر قانونی طریقے سے پاکستانی پاسپورٹ بنانے کے الزام میں گرفتار کیا تھا ۔

’امریکہ پر بڑا ایٹمی حملہ ہونے والا ہے جس سے خوفناک تباہی برپاہوگئی‘ بڑی پیشنگوئی سامنے آگئی

1985میں نیشنل جیو گرافک میگزین کے لیے شربت گلہ کی سبز آنکھوں کی تصویر لینے والے فوٹو گرافر سٹیو میک کری نے وعدہ کیا ہے کہ وہ شربت گلہ کو بچانے کے لیے ہرممکن تعاون کریں گے ۔فوٹرگرافر نے اپنے انسٹا گرام اکاونٹ پر پیغام دیتے ہوئے کہاکہ یہ انسانی حقوق کی سخت خلاف ورزی ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم شربت گلہ سے متعلق حقائق جاننے کے لیے مقامی دوستوں کے ساتھ رابطے میں ہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ شربت گلہ کے خاندان کو قانونی اور مالی مدد دینے کے لیے ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں ۔سٹیو میک کری نے مزید کہا کہ حکام کی جانب سے شربت گلہ کی گرفتاری پر اعتراض ہے ،شربت گلہ نے اپنی تمام زندگی تلخیوں کو برداشت کر تے ہوئے گزاری ہے ۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز پشاور کے علاقے نوتھیہ میں ایف آئی اے نے کارروائی کر کے شربت گلہ کو گرفتار کیا جس پر غیر قانونی طریقے سے پاکستانی شناختی کارڈ بنانے کا الزام ہے ۔میڈ یا رپورٹس کے مطابق شربت گلہ کے خاندان کو شناختی کارڈ بنا کر دینے کے الزام میں نادرا کے تین اہلکاروں کو پہلے ہی معطل کیا جا چکا ہے ۔سبز آنکھوں سے شہرت پانے والی شربت گلہ کا تعلق افغانستان سے ہے ،جو افغان جنگ کے بعد اپنے خاندان کے ساتھ پاکستان آگئی تھی ۔شربت گلہ اپنی خوبصورت آنکھوں کے باعث شہرت کی بلندیوں پر اس وقت پہنچی جب نیشنل جیو گرافک میگزین کے کور پیج پر اس کی تصویر شائع ہوئی ۔شربت گلہ افغان مونا لیزا کے نام سے بھی مشہور ہے ۔

مزید : بین الاقوامی