پنجاب اور پختونخوا کے وزرائے اعلی کو میری مکمل حمایت حاصل ہے ، عمران خان

پنجاب اور پختونخوا کے وزرائے اعلی کو میری مکمل حمایت حاصل ہے ، عمران خان

لاہور(جنرل رپورٹر ‘ نمائندہ خصوصی،مانیٹرنگ،ایجنسیاں) وزیراعظم کا سپیکر پنجاب اسمبلی سے ٹیلی فونک رابطہ،پنجاب حکومت کو مکمل تعاون اور حمایت کی یقین دہانی،پرویز الہیٰ کو دوسروں کو بھی ساتھ لے کر چلنے کی ہدایت،وزیر اعظم سے متحدہ عرب امارات کے وفد کی ملاقات ، اقتصادیات دوطرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال، انہوں نے قومی اقتصادی کونسل کی ایگزیکٹو کمیٹی بھی قائم کردی، وزیر خزانہ اسدعمرچیئرمین ہونگے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویزالٰہی سے ٹیلیفون پر رابطہ کیا اور اتحادی حکومت کے معاملات پر بات چیت کی۔ وزیراعظم نے پنجاب کے امور میں تعاون پر چودھری پرویزالٰہی سے اظہار تشکر کرتے ہوئے کہا کہ تبدیلی کے سفر میں ایک ساتھ ہیں، خواہش ہے کہ پنجاب میں تبدیلی کے معاملات کو آگے بڑھائیں۔مانیٹرنگ ڈیسک کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے چوہدری پرویز الٰہی کوٹیلی فونک گفتگو کے دوران کہا کہ پنجاب حکومت کومیرا مکمل تعاون حاصل اور حمایت جاری رہے گی۔ انہوں نے پرویز الٰہی کو کہا کہ سینئر سیاستدان ہونے کے ناطے سب کو ساتھ لے کر چلیں۔چودھری پرویزالٰہی نے وزیراعظم کو مکمل تعاون کا یقین دلاتے ہوئے کہا کہ آپ کو پنجاب سے مزید اچھی خبریں ملیں گی، وزیراعلیٰ عثمان بزدار بہت اچھا کام کر رہے ہیں، آپ کی نیت نیک، سوچ مثبت اور مقاصد اعلیٰ ہیں، سعودی عرب کے بعد انشاء اللہ آپ کو چین اور ملائیشیاء کے دورہ میں بھی کامیابیاں ملیں گی۔ سپیکر چودھری پرویزالٰہی نے پریس گیلری کے اعزاز میں ظہرانہ دیا جس میں صوبائی وزراء فیاض الحسن چوہان، حافظ عمار یاسر، سیکرٹری اسمبلی محمد خان بھٹی بھی موجود تھے۔ انہوں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نیک نیتی اور مثبت سوچ کے ساتھ ملک کو معاشی طور پر مضبوط کرنے کیلئے دن رات محنت کر رہے ہیں، وہ عام آدمی کی زندگی میں بہتری لانا چاہتے ہیں، وہ سعودی عرب سے بہت اچھا پیکیج لے کر آئے ہیں، یو اے ای سے بھی عنقریب مدد آئے گی ، شہبازشریف نے ہر شعبے اور منصوبے سے پیسہ بنایا، زراعت ہماری ریڑھ کی ہڈی ہے اسے بھی تباہ کر کے کسانوں کو بدحال کیا، عوامی فلاح و بہبود کا کوئی کام نہیں کیا۔ صحافیوں اور پریس گیلری سے میرا پرانا تعلق ہے، صحافیوں کی بہتری کیلئے پہلے بھی مثالی کام کیا اب بھی کروں گا، اچھے گھروں میں رہنا امراء کا ہی حق نہیں، اسی سوچ کے تحت میں نے ذاتی کوششوں سے صحافی کالونیاں بنائیں، لاہور میں اس کا فیز II بھی بنانا چاہتے ہیں تاکہ جو صحافی مکانوں سے محروم ہیں ان کو بھی گھر مل سکیں، اس سلسلے میں وزیراعلیٰ پنجاب سے بھی درخواست کروں گا۔ ہمارے دور کے منصوبے نواز اور شہبازشریف نے تعصب کی بنیاد پر بند کئے۔ دریں اثنا نیوز ایجنسیوں کے مطابق وزیر اعظم عمران خان سے متحدہ عرب امارات کے وفد نے ملاقات کی جس میں ملکی اقتصادی صورتحال سمیت دوطرفہ تعلقات میں بہتری اور باہمی دلچسپی کے دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ شاہ محمود قریشی وزیر خزانہ اسد عمر اور اورسیز کے وزیر نے شرکت کی۔ وزیر اعظم عمران خان نے قومی اقتصادی کونسل کی ایگزیکٹو کمیٹی قائم کردی جو8 ممبران پر مشتمل ہوگی۔وزیر خزانہ اسدعمر کمیٹی کے چیئرمین ہونگے۔ وزیر منصوبہ بندی خسرو بختار ، مشیر کفایت شعاری ڈاکٹر عشرت حسین اور مشیر صنعت و تجارت عبدالرزاق اور دیگرکمیٹی کے رکن ہونگے۔ اس حوالے سے باضابطہ نوٹیفیکیشن جاری کردیا گیا۔

عمران خان

اسلام آباد،پشاور(نیوز ایجنسیاں) محمود خان آئندہ پانچ سال تک کے پی کے وزیراعلیٰ رہیں گے ، انہیں میری، پی ٹی آئی اور ممبران اسمبلی کے پی کی بھر پور حمایت حاصل ہے، وزیراعظم ، عمران خان کی نیا پاکستان ہاؤسنگ منصوبے پر پیش رفت کو سراہتے ہوئے نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی کے قیام کو حتمی شکل دینے اورتین ہفتوں میں مختلف آمدن کے گروپوں کیلئے ہمہ جہت ماڈل تیار کرنے کی ہدایت۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے محمود خان کی قیادت پر مکمل اعتماد کا اظہارکرتے ہوئے اُن کی ان تھک کوششوں کو سراہا ہے ۔انہوں نے واشگاف الفاظ میں کہا کہ محمود خان آئندہ پانچ سال تک صوبے کے وزیراعلیٰ رہیں گے ۔ محمود خان کو میری، پی ٹی آئی اور ممبران اسمبلی کے پی کی بھر پور حمایت حاصل ہے ۔ان خیالات کا اظہار وزیراعظم نے خیبرپختونخوا کے وزیراعلیٰ محمود خان سے وزیراعظم ہاؤس میں ملاقات کرتے ہوئے کہی ۔ صوبائی وزیراطلاعات شوکت یوسفزئی بھی اس موقع پر اُن کے ساتھ موجود تھے ۔ اُنہوں نے صوبے میں محمود خان کی عوام دوست، اصلاحاتی ، اداروں کے استحکام ، اچھی اورعوام دوست حکمرانی کو سراہا اور وزیراعلیٰ سے کہا کہ وہ اپوزیشن کے منفی پروپیگنڈے اور بے تکی افواہوں پر کان نہ دہرایں ۔ آپ انصا ف اور میرٹ کی بالادستی اور اچھی حکمرانی کے کام کو جاری رکھیں اور مخالفین ویسے ہی بیروزگار ہو گئے ہیں اور اب یہ اپنے روزگار کی تلاش میں اکھٹے ہوگئے ہیں۔ دریں اثناوزیراعظم عمران خان نے نیا پاکستان ہاؤسنگ منصوبے پر پیش رفت کو سراہتے ہوئے نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی کے قیام کو حتمی شکل دینے اورتین ہفتوں میں مختلف آمدن کے گروپوں کیلئے ہمہ جہت ماڈل تیار کرنے کی ہدایت کردی اور کہا کہ منصوبے میں ملکی اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کی دلچسپی حوصلہ افزا ہے،ماضی میں ہاؤسنگ کے شعبے کو بری طرح نظر انداز کیا گیا،اس سے نو جوانوں کیلئے روزگار کے وسیع مواقع پیدا ہوں گے ۔ جمعہ کووزیراعظم عمران خان کے زیر صدارت وزیراعظم آفس میں نیا پاکستان ہاؤسنگ منصوبے پر ٹاسک فورس کا اجلاس ہوا جس میں اسد عمر ، طارق بشیر چیمہ ، خسرو بختیار، علیم خان، ڈاکٹر عمران زیب ، چیئرمین نادرا ہاؤسنگ ٹاسک فورس کے ممبران اور سینئر سرکاری افسران نے شرکت کی ۔ اجلاس میں چیئرمین نادرا نے وزیراعظم کو رجسٹریشن کے عمل سے متعلق بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ منصوبے کیلئے رجسٹریشن میں عوام زبردست دلچسپی لے رہے ہیں ،رجسٹریشن کا عمل اگلے 60روز تک جاری رہے گا ۔اخوت فاؤنڈیشن کے امجد ثاقب نے کم لاگت 10لاکھ گھروں کی تعمیر کا پلان پیش کیا۔وزیراعظم نے ہاؤسنگ منصوبے پر پیش رفت کو سراہتے ہوئے نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی کے قیام کو حتمی شکل دینے اورتین ہفتوں میں مختلف آمدن گروپوں کیلئے ہمہ جہت ماڈل تیار کرنے کی ہدایت کی ۔

مزید : صفحہ اول