اعجاز ہاشمی کی اپیل پر آسیہ ملعونہ کی ممکنہ رہائی کے خلاف یوم تحفظ ناموس رسالتؐ منایا گیا

اعجاز ہاشمی کی اپیل پر آسیہ ملعونہ کی ممکنہ رہائی کے خلاف یوم تحفظ ناموس ...

لاہور ( ایجوکیشن رپورٹر ) جمعیت علما پاکستا ن کے مرکزی صدر اور متحدہ مجلس عمل کے نائب صدر پیر اعجاز احمد ہاشمی کی اپیل پرگستاخ رسول مسیحی خاتون آسیہ ملعونہ کی ممکنہ رہائی کے خلاف یوم تحفظ ناموس رسالت منایا گیا۔ نمازجمعہ کے بعد احتجاجی ریلیاں نکالی گئیں اور مظاہرے کئے گئے۔ جمعہ کے خطبات میں علما ء کرام نے ناموس رسالت کے موضوع پر تقاریر کرتے ہوئے واضح کیا کہ ختم نبوت اور ناموس رسالت کا تحفظ ہر مسلمان پر فرض ہے۔

حکمران ٹولہ عالمی سازشی عناصر سیکولر طبقات کو خوش کرنے اور قادیانیوں کی سازشوں کو تحفظ فراہم کرنے کے لئے ناموس رسالت قانون کو غیر موثر بنانا چاہتے ہیں،مگر عشاقان مصطفی ایسا ہر گز نہیں ہونے دیں گے۔

۔ انہوں نے کہا کہ جے یو پی کے سربراہ قائد ملت اسلامیہ مولانا شاہ احمد نورانی مرحوم کی تحریک، جدوجہد اورقومی اسمبلی میں دلائل پرقادیانیوں کو غیرمسلم اقلیت قراردیا گیا۔ اس قانون کا تحفظ اہل سنت اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کرکے بھی کریں گے۔ امریکہ، برطانیہ اور دیگر مغربی ممالک قادیانیوں کی سرپرستی سے باز آجائیں۔علما کا کہنا تھاکہ کچھ عناصر آسیہ ملعونہ کو بچانا چاہتے ہیں، مگر ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے۔ عدالتیں اسلامی فیصلے کریں، بیرونی دباو میں نہ آئیں۔ ورنہ ملکی حالات اچھے نہیں رہیں گے۔ آسیہ کو چھوڑا گیا تو ردعمل سخت ہوگا، جس کا ملک متحمل نہیں ہوسکتا۔ اس لئے حالات کو بہتر بنانے کے لئے جج صاحبان ایسا فیصلہ کریں۔ ججوں کو کسی حکومتی دباو میں نہیں آنا چاہیے، فیصلے امت مسلمہ کے عقیدے کے مطابق کئے جائیں۔ پہلے بھی غازی ممتاز حسین قادری کے بارے میں غلط فیصلے کے باعث ملکی حالات کو قابو نہیں کیا جاسکا تھا۔ جمعہ کے اجتماعات میں قراردادیں بھی منظور کی گئیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1