کیا واقعی ایک اسرائیلی طیارہ خفیہ طور پر پاکستان آیا ؟ ایک خبر جس نے کھلبلی مچا دی

کیا واقعی ایک اسرائیلی طیارہ خفیہ طور پر پاکستان آیا ؟ ایک خبر جس نے کھلبلی ...
کیا واقعی ایک اسرائیلی طیارہ خفیہ طور پر پاکستان آیا ؟ ایک خبر جس نے کھلبلی مچا دی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان اور اسرائیل کے درمیان سفارتی تعلقات نہیں ہے اور اس وجہ سے ان دونوں ملکوں کے ددرمیان کوئی پرواز بھی نہیں ہے تاہم سوشل میڈیا پر ایک خبر زور پکڑ رہی ہے کہ 24 اکتوبر کو اسرائیل سے ایک طیارہ اسلام آباد ایئرپورٹ پر لینڈ کیا ہے اور اس کی پرواز کے انتہائی حیران روٹ کا دعویٰ کیا جارہاہے جس نے کئی قسم کے سوالات کھڑے کر دیئے ہیں ۔

برطانوی نشریاتی ادارے نے دعویٰ کیاہے کہ جس طیارے کے بارے میں بات کی جا رہی ہے، وہ طیارہ کینیڈا کی طیارہ ساز کمپنی بمبارڈیئر کا بنایا ہوا 'گلوبل ایکسپریس ایکس آر ایس' طیارہ ہے۔ اس طیارے کا سیریل نمبر 9394 ہے۔ یہ 22 فروری 2017 سے خود مختار برطانوی ریاست 'آئل آف مین' میں رجسٹرڈ ہے اور اس سے قبل اس طیارے کی رجسٹری کے مین جزائر میں تھی۔

یہ خبر سوشل میڈیا پر اس وقت پھیلی جب ایک اسرائیلی صحافی ایوی شراف جمعرات کی صبح تقریبا 10 بجے ٹویٹ کیا جس میں انہوں نے کہا کہ ایک پرواز اسرائیل سے پاکستان کی سرزمین پر لینڈ کی ہے ۔اسرائیلی صحافی کا کہناہے کہ اس پرواز کو پاکستان کے شہر اسلام آباد میں لینڈ کروانے کیلئے پائلٹ نے انتہائی چالاکی کا مظاہرہ کیا جس کے باعث اس پرواز کے کوڈ ز ہی تبدیل ہو گئے ۔

صحافی نے اپنے ٹویٹ میں لکھا کہ یہ طیارہ تل ابیب سے اڑ کر پانچ منٹ کے لیے اردن کے دارالحکومت عمان کے کوئین عالیہ ہوائی اڈے پر اترا اور اترنے کے بعد اسی رن وے سے واپس پرواز کے لیے تیار ہوا۔اس طرح یہ پرواز جو تل ابیب سے اسلام آباد کے روٹ پر جانے کے بجائے اس 'چھوٹی سی چالاکی' کی مدد سے تل ابیب سے عمان کی پرواز بنی اور پانچ منٹ کے اترنے اور واپس پرواز کرنے سے یہ پرواز عمان سے اسلام آباد کی فلائٹ بن گئی۔اس طرح روٹ تبدیل کرنے سے پروازوں کے مخصوص کوڈ بھی مختلف بن جاتے ہیں جن سے یہ مختلف ایئر ٹریفک کے ٹاورز سے رابطہ کر کے شناخت کرواتے ہیں اور یوں اس پرواز نے پاکستان جانے کے مسئلے کا حل نکالا۔طیارہ پہلے ہی اسرائیلی نہیں تھا اور اس 'چالاکی' سے پرواز بھی عمان سے اسلام آباد کی بن گئی۔

اپنی بات کی وضاحت کرنے کے لیے ایوی شراف نے اسی طرح کی ایک اور پرواز کا ثبوت اپنے ٹوئٹر پر دے رکھا ہے جو ابوظہبی سے تل ابیب سعودی عرب کے اوپر سے پرواز کر کے آئی مگر براستہ عمان جہاں طیارہ اترا اور پھر نئے کوڈ کے ساتھ پرواز کر گیا۔

سوشل میڈیا پر ایک مبینہ اسرائیلی طیارے کی اسلام آباد آمد کی خبر گرم ہے اور اس پر مختلف چہ مگوئیاں ہو رہی ہیں۔ کئی لوگ سوالات بھی پوچھ رہے ہیں جن میں نامور صحافی بھی شامل ہیں۔جیو نیٹ ورک سے منسلک صحافی طلعت حسین نے سوال کیا کہ 'اسرائیلی طیارے کی پاکستان آمد اور مبینہ مسافر کی واپسی کی خبر سوشل میڈیا پر پھیلتی جا رہی ہے۔ سرکار کو اس کی وضاحت کرنی ہے۔ اقرار یا انکار۔ خاموشی بڑے مسائل کو جنم دے گی۔ ایران اور دوسرے ممالک کھڑے کانوں کیساتھ اس افواہ نما خبر کو سن رہے ہوں گے۔'

مزید : اہم خبریں /قومی