خاشقجی قتل میں ملوث ملزمان پر مقدمہ سعودی عرب میں چلایا جائے گا: عادل الجبیر

خاشقجی قتل میں ملوث ملزمان پر مقدمہ سعودی عرب میں چلایا جائے گا: عادل الجبیر
خاشقجی قتل میں ملوث ملزمان پر مقدمہ سعودی عرب میں چلایا جائے گا: عادل الجبیر

  

ریاض (ڈیلی پاکستان آن لائن)سعودی عرب کے وزیر خارجہ عادل الجبیر نے واضح کیا ہے کہ صحافی جمال خاشقجی کے قتل میں ملوث ملزمان پر مقدمہ سعودی عرب میں چلایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب روشنی اور ایران اندھیرا ہے لیکن سوال یہ ہے کہ اندھیرے پر قابو کیسے پایا جائے ۔

اپنے ایک بیان میں سعودی وزیرخارجہ عادل الجبیر نے کہا کہ خاشقجی کیس میں سعودی قانون نافذ کرنے والے ادارے ترکی کے ساتھ کام کررہے ہیں،یہ اعصابی تناو¿ بن چکا ہے، تحقیقات میں وقت لگتاہے۔ خاشقجی کیس کی تحقیقات میں حقائق سامنے آ رہے ہیں، قتل میں ملوث ملزمان پر مقدمہ سعودی عرب میں چلایا جائے گا۔

سعودی وزیرخارجہ عادل الجبیر نے کہا کہ سعودی عرب کے امریکاکےساتھ تعلقات ناقابل تسخیرہیں۔ اوباما انتظامیہ کیساتھ سعودی عرب کے تعلقات مشکلات کا شکار رہے جبکہ ٹرمپ انتظامیہ کی خارجہ پالیسی معقول اور حقیقت پرمبنی ہے،امریکی صدر ٹرمپ سے تعاون جانبدارانہ سیاست نہیں بلکہ قومی مفادکیلئے ہے، ٹرمپ کی خارجہ پالیسی کی تمام خلیجی ممالک حمایت کرتے ہیں۔انہوں نے واضح کیا کہ اسرائیل کے ساتھ تعلقات نارمل کرنے کیلئے امن عمل اہم ہے۔

ایران کے حوالے سے اظہار خیال کرتے ہوئے سعودی وزیر خارجہ نے کہا کہ مشرق وسطیٰ میں دونظریات سے نمٹ رہے ہیں، سعوی عرب روشنی اور ایران اندھیراہے ،روشنی اندھیرے پر سبقت لے جاتی ہے لیکن سوال یہ ہے اندھیرے کوکیسے ہرایا جائے۔

مزید : اہم خبریں /عرب دنیا