پنجاب آب پاک اتھارٹی میں پیپرلیس ورکنگ کا آغاز

پنجاب آب پاک اتھارٹی میں پیپرلیس ورکنگ کا آغاز
پنجاب آب پاک اتھارٹی میں پیپرلیس ورکنگ کا آغاز

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پنجاب آب پاک اتھارٹی میں پیپرلیس ورکنگ کا آغاز کر دیا گیا،چئیرمین ڈاکٹر شکیل خان  کا کہنا تھا کہ حکومت کی ترجیحات کے مطابق محکمے کو انفارمیشن ٹیکنالوجی سے آراستہ کیا جارہا ہے،خط و کتابت کے تمام امور ڈیجیٹل طریقے سے سرانجام دیئے جائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق گلبرگ میں واقع پنجاب آب پاک اتھارٹی کے ہیڈ آفس میں چئیرمین ڈاکٹر شکیل خان،  چیف ایگزیکٹو آفیسر سید زاہد عزیز سمیت اعلی افسران نےشرکت کی ۔ڈاکٹرشکیل خان نے کہا کہ ڈیجیٹل نظام کی بدولت تمام معلومات کو ذخیرہ کرنا اور ان تک رسائی آسان کر دی گئی ہے ،جس سے شفافیت کے نظام پر عمل درآمد کرنے میں مدد ملے گی،ملازمین کی تمام معلومات ڈیجیٹل سرور پر منتقل کر دی گئیں ۔

چیف ایگزیکٹو آفیسر سید زاہد عزیز کا کہنا تھا کہ ملازمین کے پے رول کو بھی ڈیجیٹل نظام پر منتقل کر دیا گیا،الیکٹرونک فائلوں پر ہونے والی کارروائی کم از کم مدت میں ممکن ہوگی،محکمے کے اندر پورے پنجاب میں دستاویزات کو ایک کلک پر ارسال کیا جاسکے گا، کاغذ کی بچت کے علاوہ ڈیجیٹل نظام ماحول دوست بھی ثابت ہوگا ۔ سید زاہد عزیز نے کہا کہ ڈیجیٹل نظام سے ہم آہنگی کیلئے تمام افسران اور اسٹاف کی تربیت شروع کر دی گئی ۔اجلاس میں ڈپٹی ڈائریکٹر آئی ٹی شاہد ابراہیم سمیت ڈیجیٹل نظام کی تخلیق میں حصہ لینے والی آئی ٹی ٹیم کے کام کو سراہا گیا ۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -