روس کو فوجی سازوسامان فروخت کرنے کے الزام میں جرمنی سے کاروباری شخص گرفتار

روس کو فوجی سازوسامان فروخت کرنے کے الزام میں جرمنی سے کاروباری شخص گرفتار
روس کو فوجی سازوسامان فروخت کرنے کے الزام میں جرمنی سے کاروباری شخص گرفتار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


برلن(مانیٹرنگ ڈیسک) جرمنی میں ایک کاروباری شخص کو روس کو فوجی سازوسامان فروخت کرنے کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا۔ نجی ٹی وی چینل 24نیوز کے مطابق ملزم کا تعلق وسطی جرمنی کے شہر کاسل سے بتایا گیا ہے جو ڈرون طیاروں کے پرزے، ماڈل ایئرکرافٹ انجن اور دیگر الیکٹرانک سامان روس کو فروخت کر رہا تھا جسے مبینہ طور پر روسی فوج یوکرین کے خلاف جنگ میں استعمال کر رہی تھی۔
رپورٹ کے مطابق یورپی یونین کی طرف سے روس پر پابندیاں عائد کی گئی ہیں، چنانچہ جرمن حکومت کو دھوکہ دینے کے لیے یہ کاروباری شخص ہانگ کانگ کی ایک بین الاقوامی کمپنی کے ذریعے یہ سامان روس کے شہر سینٹ پیٹرز برگ بھجوا رہا تھا۔پراسیکیوٹرز کی طرف سے عدالت کو بتایا گیا ہے کہ ملزم اب تک روس کو 2.1ارب ڈالر مالیت کا سامان بھجوا چکا تھا۔
واضح رہے کہ رواں سال اگست میں بھی جرمنی میں ایک شخص کو روس کو ’اورلان 10‘ ڈرون کے پرزے فروخت کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔جرمنی میں اس ڈرون کے پرزے عام ملتے ہیں اور روس ان ڈرونز کو فوجی مقاصد کے لیے استعمال کرتا ہے۔