چقندر کا جوس ہارٹ اٹیک سے محفوظ رکھتا ہے، حکیم محمد شفیع طالب

چقندر کا جوس ہارٹ اٹیک سے محفوظ رکھتا ہے، حکیم محمد شفیع طالب

لاہور ( پ ر ) چقندر جسم میں بڑھتی ہوئی حدت و حرارت کو خارج کرکے نظامِ جگر و مثانہ کی اصلاح کرتا ہے ۔ےہ ایک محرک اعصاب سبزی ہے جسکا مزاج تر سرد ہے ۔ چقندر میں نائٹریٹ قدرتی طور پر پائی جاتی ہے اسلئے ےہ بلڈ پریشر کو کم کرتا ہے اس میں موجود نائٹریٹ ایک گیس تیار کرتی ہے جسے نائٹر اوکسائیڈ کہا جاتا ہے ، جو خون کی گردش کرنے والی نسوں اور شریانوں کو چوڑا کرتی ہے جس سے بلڈ پریشر کم ہو جاتا ہے۔ ان خیالات کا اظہار ماہرین علاج با الغذاءپروفیسر حکیم محمد شفیع طالب قادری ،حکیم ریاض الدین صدیقی ،حکیم عبدالرزاق ربانی، پروفیسر حکیم منیر احمد شکوری،ڈاکٹر جاوید اقبال، ڈاکٹر محمد عابد شفیع ، حکیم ساجد قادری ، طبیبہ غلام زینب اورحکیم محمد افضل میو نے نیشنل ہربل ریسرچ انسٹی ٹیوٹ میں چقندر کی افادیت کے حوالے سے منعقدہ ایک تحقیقی نشست سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ چقندر کے رس کا ایک گلاس روزانہ پینے سے کولیسٹرول نارمل رہتا ہے ۔ چقندر جگر کی اصلاح کرکے جسم میں صالح خون پیدا کرنے میں مدد دیتا ہے ۔ رنگت میں نکھار پیدا کرنے میں مستعمل ہے ۔ پیشاب کی جلن اور سوزش دور کر کے گردوں کی صفائی کا اہتمام کرتا ہے

مزید : میٹروپولیٹن 1