شمیم کو قتل کیا گیا، انصاف نہ ملا تو احتجاج کرینگے، اہل محلہ

شمیم کو قتل کیا گیا، انصاف نہ ملا تو احتجاج کرینگے، اہل محلہ

لاہور(خبر نگار) الطاف کالونی میں شمیم اختر کی ہلاکت پر پورے علاقے میں تاحال سوگ کا سماں ہے اور اہل محلہ سراپا احتجاج بنے ہوئے ہیں۔ مکینوں محمد اسحاق،محمد حنیف اور ابراہیم سمیت حسن خان اور چوہدری اکبر نے روزنامہ ”پاکستان“ کو بتایا کہ محنت کش شمس الدین کی بیٹی شمیم اختر کو قتل کیا گیا ہے اور اگر ناقص تفتیش میں متاثرہ گھرانے کو انصاف نہ دیا گیا تو اہل علاقہ انصاف پر احتجاج کا سلسلہ جاری رکھیں گے۔ جائے وقوعہ پر پولیس سے بھی پہلے پہنچنے والے میاں اسحاق نے بتایا کہ شمیم اکتر کے بازوﺅں پر گہرے زخموں کے نشانات ،بازوﺅں اور ٹانگوں پر تشدد کے نشانات تھے اور جائے وقوعہ پر خون کے نشانات نہ ہونا اہم سوالات ہیں۔پولیس کو اِن تمام پہلوﺅں کو سامنے رکھ کر تفتیش کرنی چاہیے جبکہ ہلاک ہونے والی شمیم اختر کے بھائی آصف اور حافظ دانش سمیت والدہ کنیز بی بی نے بتایا کہ وقوعہ سے 2 سے 3 گھنٹے قبل شمیم اختر نے جو کپڑے پہن رکھے تھے ہلاکت کے بارے میں علم ہونے پر جاکر دیکھا تو وہ کپڑے نہیں تھے اور شمیم اختر کو کوئی دوسرا سوٹ پہنا دیا گیا تھا اور اُس کا جسم نیلا پڑ چکا تھا۔

مزید : ایڈیشن 1