سندھ میں ایم کیو ایم کے سو ا پیپلز پارٹی کے تمام اتحادی اپوزیشن میں آگئے

سندھ میں ایم کیو ایم کے سو ا پیپلز پارٹی کے تمام اتحادی اپوزیشن میں آگئے
سندھ میں ایم کیو ایم کے سو ا پیپلز پارٹی کے تمام اتحادی اپوزیشن میں آگئے

  


کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) سندھ اسمبلی میں مسلم لیگ فنکشنل،نیشنل پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ق نے اپوزیشن بینچوں پر بیٹھنے کے لیے درخواستیں جمع کرادی گئی ہیں۔ فنکشنل لیگ کے رہنما جام مدد علی کا کہنا ہے کہ پیپلز پارٹی کو اپنے ارکان اسمبلی پر اعتماد نہیں اسی لیے بلدیاتی نظام کا آرڈیننس جاری ہوا۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ فنکشنل کے پارلیمانی لیڈر جام مدد علی نے کہاکہ وہ سندھ میں ایک وقت میں ایک نظام چاہتے ہیں اور اس پر کوئی سودے بازی نہیں ہوگی۔انہوں نے کہاکہ پیپلز پارٹی کے وزراءنے خود آرڈیننس کی شقوں کو مطالعہ نہیں کیا۔نیشنل پیپلز پارٹی کے پارلیمانی لیڈر مسرور جتوئی کا کہنا تھا کہ سندھ کی تقسیم کی سازش کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔مسلم لیگ ق کے رکن سندھ اسمبلی شہریا ر مہر نے بتایا کہ وہ مسلم لیگ ق میں ہیں اور اسے چھوڑنے کا کوئی ارادہ نہیں ہے ۔پارٹی کے کچھ لوگ وزارتوں کے چکر میں ہیں چند روز میں وہ بھی اپوزیشن میں آجائیں گے۔شہریار مہر نے انکشاف کیاکہ اگلے ماہ تک مسلم لیگ ق وفاق میں بھی اپوزیشن بینچز میں بیٹھنے کا فیصلہ کر لے گی۔تازہ ترین اطلاعات کے مطابق اے این پی نے بھی اپوزیشن بنچوں میں بیٹھنے کا اعلان کردیاہے۔

مزید : کراچی


loading...