جان بوجھ کر ڈراپ کیا گیا ،کھلاڑیوں کے ساتھ نہ دینے پر دکھ ہوا ،یونس خان

جان بوجھ کر ڈراپ کیا گیا ،کھلاڑیوں کے ساتھ نہ دینے پر دکھ ہوا ،یونس خان ...

  



                                                کراچی (آئی این پی) قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان یونس خان نے کہا ہے کہ اگر مجھے ٹیم میں سلیکٹ نہیں کیا گیا تو کیا میں خود کو گولی مار لوں، میں کسی کےخلاف نہیں، مصباح الحق نے میرے لئے نہیں اپنے لئے فائٹ کی ہو گی، میں نے تو ہمیشہ پوری ٹیم کےلئے فائٹ کی، بطور کپتان شعیب ملک، شاہد آفریدی، مصباح الحق اور دیگرکو ٹیم میں شامل رکھنے کیلئے لوگوں سے لڑتا رہا اس سے زیادہ افسوسناک بات کیا ہوگی کہ میرے جیسے کھلاڑی کے بارے میں یہ کہا جائے کہ اس کا کوئی مستقبل نہیں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میرے جیسے سینئر پلیئر کے متعلق کہا جاتا ہے کہ ہم ان کے مستقبل کے منصوبے میں شامل نہیں تو کیا ہمیں پاکستان چھوڑ دینا چاہیے، میں کبھی کسی جوڑ توڑ میں شریک نہیں رہا، میں پاکستان کی طرف سے کھیلنے سے معافی مانگتا ہوں اور چیلنج کرتا ہوں کہ مجھے ٹیسٹ ٹیم میں بھی سلیکٹ نہ کیا جائے، چار پانچ ماہ کا وقت لے لیں اور ٹیم تیار کر کے دکھائیں اگر تو مجھے نکالنے سے ٹیم بن جاتی ہے تو میں ہر قسم کی کرکٹ سے ریٹائر ہو جاﺅں گا اور اگر نہیں بن پاتی تو پھر سارے سلیکٹرز استعفےٰ دے دیں۔ انہوں نے کہا کہ اسی طرح کی تبدیلیاں بڑے ایونٹ کے بعد کی جاتی ہیں جیسے میں نے ورلڈ کپ جیتنے کے بعد استعفیٰ دے دیا تھا ،تبدیلیاں میگا ایونٹ سے تین ماہ پہلے نہیں کی جاتیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 3