طاہر القادری کو بھی لاہور ،کراچی اور پشاور میں جلسے کرنےکی تجویز

طاہر القادری کو بھی لاہور ،کراچی اور پشاور میں جلسے کرنےکی تجویز

  



لاہور(حنیف خان)تحریک انصاف کی طرف سے احتجاجی جلسوں کے اعلان کے پیش نظر مسلم لیگ ق اور عوامی مسلم لیگ نے عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری کو بھی لاہور ،کراچی اور پشاور میں جلسے کرنے کی تجویز دے دی جس کے بعد عوامی تحریک نے اپنے اتحادی جماعتوں کے رہنماﺅں سے مشاورت کے بعد فیصلہ کرنے کا گرین سگنل دے دیا ہے ۔ذرائع نے بتایا کہ اسلام آباد دھرنوں میں عوامی تحریک اور تحریک انصاف مطلوبہ نتائج حاصل نہیں کرپارہے جس کے بعد تحریک انصاف نے جہاں مختلف شہروں میں احتجاجی جلسوں کی صورت میں عوامی طاقت کا مظاہرہ کرنا شروع کردیا ہے وہاں پر ہی مسلم لیگ ق کے سربراہ چودھری شجاعت حسین اور عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے الگ الگ عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری کے ساتھ کنٹینر میں ملاقات کی جس میں تحریک انصاف کے کراچی جلسے پر تفصیلی گفتگو کرتے ہوئے چودھری شجاعت حسین اور شیخ رشید نے ڈاکٹر طاہرالقادری کو مشورہ دیا کہ وہ بھی لاہور ،کراچی اور پشاور میں احتجاجی جلسے کریں ۔ذرائع نے بتایا کہ دونوں جماعتوں کی طرف سے ملک بھر میں احتجاج دھرنوں کی کال دی گئی مگر ان دھرنوں کا وہ رزلٹ نہیں آیا جس کی توقع تھی ۔تاہم اب احتجا جی جلسوں سے عوام کو حکومت مخالف تحریک کے لئے ذہنی طور پر مذید تیار کیا جائے گا ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ ق اور عوامی مسلم لیگ کی اس تجویز پر ڈاکٹر طاہرالقادری اپنی اتحادی جماعتوں سے مشاورت کریں گے ۔خصوصی طورپر سنی اتحاد کونسل اور مجلس وحدت المسلیمین کو اعتماد میں لینے کے بعد فیصلہ کیا جائے گا۔ مذید براں اس بات کا امکان ہے کہ عوامی تحریک اپنے احتجاجی جلسوں کا آغاز لاہور سے کریگی جس کے بعد کراچی کا انتخاب کیا جائے گا اور حکومت مخالف تحریک کے دوران پنجاب کو زیادہ فوکس کی جائے گا اور پنجاب کی عوام کو سڑکوں پر لانے کے لئے یونین کونسل سطح پر دوبارہ سے رابطے کئے جائیں گے ۔ 

تجویز

مزید : صفحہ آخر


loading...