بھوپال کے مسلمان عید پر سبزی کھائے جانے کی تجویز پر ناراض

بھوپال کے مسلمان عید پر سبزی کھائے جانے کی تجویز پر ناراض
بھوپال کے مسلمان عید پر سبزی کھائے جانے کی تجویز پر ناراض

  



بھوپال(ویب ڈیسک)بھارت کے معروف شہر بھوپال میں مسلم برادری عید الاضحٰی کے موقع پر گوشت کے بجائے سبزی کھانے کی تلقین کئے جانے پر ناراض ہو گئی ہے، اس کا کہنا ہے کہ یہ ان کے مذہب میں مداخلت ہے۔ عالمی میڈیا کے مطابق حیوانوں کے تحفظ کی تنظیم کی ایک رکن نظیر ثریا شہر کی معروف تاج المسجد کے علاقے میں عید کے تہوار پر گوشت کے بجائے سبزی کے ساتھ منانے کا پیغام دے رہی تھیں۔ وہ لوگوں سے اپیل کر رہی تھیں کہ گوشت خوری چھوڑ کر لوگوں کو سبزی خور بننا چاہئے تاہم مقامی لوگوں نے ان کی زبردست مخالفت کی۔ مسلم برادری کا کہنا تھا کہ عید پر بکرے کی قربانی کی مخالفت کرنے سے ان کے جذبات مجروح ہوئے ہیں، قربانی ان کا مذہبی حق ہے جس میں کسی بھی طرح کی مداخلت برداشت نہیں کی جائے گی۔ بھوپال شہر کے مسلمانوں کا ایک گروہ ان کے اس بیان سے سخت ناراض ہو گیا اور مشتعل ہجوم نے نظیر ثریا پر حملہ کرنے کی بھی کوشش کی تاہم وہاں پر موجود پولیس نے انھیں روک دیا۔ جانوروں کے حقوق اور تحفظ کے لیے کام کرنے والے معروف ادارے پیپلز فار دی ایتھیل ٹریٹمنٹ آف اینملز کے بعض ارکان کو شہر کی مسلم برادری کے غصے کا سامنا بھی کرنا پڑا۔

مزید : بین الاقوامی


loading...