صحت کےمتعلق وہ جھوٹ جنہیں آپ سچ سمجھتے ہیں

صحت کےمتعلق وہ جھوٹ جنہیں آپ سچ سمجھتے ہیں
صحت کےمتعلق وہ جھوٹ جنہیں آپ سچ سمجھتے ہیں

  



غلط فہمیوں، افواہوں اور بُری سائنسی تحقیق کے نتائج کی روشنی میں اکثریت ایسے مغالطوں کا شکار رہتی ہے جو خراب صحت کا موجب بنتے ہیں، آئیے ان پر ایک نظر ڈالتے ہیں۔

-1 سیر شدہ چکنائیاں دل کے لئے مضر ہوتی ہیں

ساڑھے تین لاکھ لوگوں پر ایک سیر حاصل تحقیق کی گئی تو معلوم ہوا کہ ان میں سے 11 ہزار لوگوں نے دل کے دورے کا درد سہا ہے۔ یہ ساڑھے تین لاکھ لوگ مکھن، کریم، پنیر، گوشت اور چکنائیوں والی خوراک شوق سے کھاتے تھے۔ لہٰذا یہ کہنا غلط ہے کہ یہ غذائیں دل کے دورے کا سبب بنتی ہیں۔ دراصل ان غذاﺅں کے ا ستعمال کے ساتھ ساتھ احتیاطی تدابیر کو بھی مد نظر رکھنا چاہیے۔

-2 وزن کم کرنے کیلئے کم کھانا

ایک کہاوت ہے کہ بھوک رکھ کر کھاﺅ اور اس سے پہلے کے بھوک لگے کچھ نہ کچھ اپنے معدے میں اتار لو تو صحت اچھی رہتی ہے لیکن تحقیق نے ثابت کیا ہے کہ کچھ نہ کچھ کھاتے رہنے کا فلسفہ یکسر غلط ہے، جو مرضی کھائیں لیکن دن میں ایک مرتبہ ہلکی پھلکی ورزش ضروری ہے۔

-3 نشاستہ دار غذائیں فربہ بناتی ہیں

یہ خیال بھی جدید تحقیق نے غلط ثابت کردیا ، بس یہ خیال رکھیں کہ اگر آپ اپنے معدے کو محفوظ اور صحت مند رکھنا چاہتے ہیں تو سب کچھ کھائیں تاکہ جسم میں توانائی کا احیاءہوتا رہے لیکن اپنے وزن کو بڑھنے سے روکیں۔

-4 جوسز صحت مند ہوتے ہیں

ایسا جوس جس میں 30 پھلوں کا رس شامل ہو سے بہتر ہے کہ آپ آدھا پھول بند گوبھی یا پالک کھا لیں۔ یہ جوسز پیاس تو بجھا سکتے ہیں لیکن اچھی صحت کی ضمانت نہیں دے سکتے۔ کیلیفورنیا یونیورسٹی کی ریسرچ بتاتی ہے کہ فروکٹوس مرکب جو جوسز میں پایا جاتا ہے موٹاپے کا سبب بنتا ہے۔

-5 کم چکنائی والی غذائیں صحت مند ہوتی ہیں

یہ خیال بھی غلط ثابت ہوا۔اس کا مطلب یہ ہوا کہ ایسی تمام غذاﺅں کو اپنی زندگی سے خارج کردیا جائے جس میں کم از کم فیٹ پایا جاتا ہو لیکن اگر جسم کو فیٹ کی ضرورت ہے تو اس کا متبادل کیا ہے؟ پھر وہی بات دہرائی جاتی ہے کہ صرف حفاظتی تدابیر کو ملحوظ خاطر رکھیں۔

مزید : تعلیم و صحت


loading...