نوسربازوں نے ایک ہی ہلے میں چین کی درجنوں امیر ترین خواتین کو لوٹ لیا، طریقہ واردات ایسا کہ جان کر آپ کی آنکھیں بھی کھلی کی کھلی رہ جائیں

نوسربازوں نے ایک ہی ہلے میں چین کی درجنوں امیر ترین خواتین کو لوٹ لیا، طریقہ ...
 نوسربازوں نے ایک ہی ہلے میں چین کی درجنوں امیر ترین خواتین کو لوٹ لیا، طریقہ واردات ایسا کہ جان کر آپ کی آنکھیں بھی کھلی کی کھلی رہ جائیں

  

بیجنگ (نیوز ڈیسک) چین کی درجنوں امیر کبیر خواتین کو نوسر بازوں کے ایک گروہ نے خوبصورت اور جوان بنانے کا جھانسہ دے کر کروڑوں کی رقم لوٹ لی۔

"CNR News" کے مطابق چین میں گزشتہ چھ ماہ سے ہانگ کانگ کے ایک ’بڑے بیوٹی کلینک‘ کی طرف سے خصوصی پارٹیوں کا اہتمام کیاجارہا تھا جس میں اعلیٰ طبقے کی امیر ترین خواتین کو مدعو کیا جاتا تھا۔ ان پارٹیوں میں شرکاء کیلئے شاندار تواضع اور رقص و سرور کے علاوہ ہینڈسم مرد ماڈلز کی کمپنی بھی فراہم کی جاتی تھی اور ’ماہر ڈاکٹر‘ خواتین کو حسن میں اضافے کیلئے پلاسٹک سرجری کے بارے میں مشاورت فراہم کرتے تھے۔ چینی میڈیا کے مطابق نوسر باز گروپ نے اپنی زرق برق پارٹیوں اور جعلی ماہرین کے ذریعے درجنوں مالدار خواتین کو قائل کرلیا کہ وہ اس گروپ کے ہانگ کانگ میں واقع سٹیٹ آف دی آرٹ کلینک سے پلاسٹک سرجری کروائیں۔ نوسر باز گروپ 30 کے قریب خواتین کو ہانگ کانگ لے گیا جہاں پہلے دن انہیں ایک فائیو سٹار ہوٹل میں ٹھہرایا گیا، جبکہ اگلے دن انہیں میڈیکل مشاورت فراہم کی گئی۔ تیسرے دن ان خواتین کی پلاسٹک سرجری شروع کی گئی اور متعدد کے آپریشن کئے گئے جبکہ کچھ کو ہارمونز کے انجکشن بھی لگائے گئے۔ ان خواتین کو سمندر کی سیر کروائی گئی جبکہ مرد ماڈلز کی کمپنی سے لطف اندوز ہونے کے بھی وسیع مواقع فراہم کئے گئے، لیکن اب یہ انکشاف ہوا ہے کہ پلاسٹک سرجری کرنے والے ماہر بھی جعلی تھے اور اکثر ادویات بھی جعلی اور مضر صحت تھیں۔

مزید پڑھیں: شادی کے خواہشمند چینی شہری نے دلہن کی تلاش میں 11 کروڑ اڑا دیئے،پھر بھی کامیابی نہ ملی تو کیا کیا،جان کر آپ کو بھی حیرت ہو گی

خوبصورتی میں اضافے کیلئے ہر خاتون نے 38 ہزار یوان (تقریباً 6 لاکھ 22 ہزار پاکستانی روپے) کی بنیادی فیس ادا کی تھی، جبکہ ہر ہارمون انجکشن کی فیس ڈیڑھ لاکھ یوان، اور لائیو سیل انجکشن کی قیمت 70 لاکھ یوان (تقریباً سوا کروڑ پاکستانی روپے) وصول کی گئی۔ ایک خاتون کو تو سپیشل میڈیکل پیکیج 30 لاکھ یوان (تقریباً 5 کروڑ پاکستانی روپے) میں فروخت کیا گیا۔ لٹنے والی خواتین میں چینی اداکارائیں اور سیاسی و کاروباری شخصیات کی بیگمات شامل ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس