ہاتھوں کی لکیروں کے بعد قسمت کا حال بتانے کا ایک انتہائی شرمناک طریقہ سامنے آ گیا

ہاتھوں کی لکیروں کے بعد قسمت کا حال بتانے کا ایک انتہائی شرمناک طریقہ سامنے آ ...
ہاتھوں کی لکیروں کے بعد قسمت کا حال بتانے کا ایک انتہائی شرمناک طریقہ سامنے آ گیا

  

لیما(نیوز ڈیسک) چہرہ شناسی اور دست شناسی جیسے علوم تو عام پائے جاتے ہیں لیکن پیرو سے تعلق رکھنے والی خاتون بیبیان ارانگو ان چند افراد میں سے ایک ہیں کہ جو دعویٰ کرتے ہیں کہ وہ کولہوں کا ملاحظہ کر کے کسی کی شخصیت اور اس کے مستقبل کا حال بتا سکتے ہیں۔

کیا آپ ناپسندیدہ میسجز اور کالز وصول کرنے سے تھک گئے ہیں؟ تو یہ خبر آپ کے لئے ہے

صحافی مینوئل روئدا بتاتی ہیں کہ انہوں نے پیرو کے دارلحکومت میں ارانگو سے ملاقات کی اور ان کے فن کے بارے جانا۔ روئدا نے بتایا کہ ارانگو نے ان کے کولہوں کا ملاحظہ کر کے نہ صرف شخصیت کے بارے میں دلچسپ باتیں بتائیں بلکہ ماضی اور حال کے متعلق بھی بہت کچھ بتایا۔ روئدا کی دلچسپی بڑھی تو انہوں نے ارانگو سے ان کے علم کے بارے میں کچھ تفصیلات جاننا چاہیں۔ ارانگو نے بتایا کہ انسانی کولہوں کی شکل اور خدوخال بہت اہم معلومات فراہم کرتی ہیں۔

ان کے علم کے مطابق کولہوں کو کل چار اقسام میں تقسیم کیا جا سکتا ہے، یعنی گول، چوکور، ناشپاتی اور V شکل کے کولہے۔ دایاں کولہا مستقبل کا حال بتاتا ہے جبکہ بائیں کولہے سے ماضی کے بارے میں اندازہ لگایا جا سکتا ہے۔ وہ کہتی ہیں کہ گول کولہوں والے افراد بہت پر امید ہوتے ہیں لیکن جذباتی طور پر عدم استحکام کے شکار ہوتے ہیں۔ چوکور کولہوں والے پختہ ارادے والے ہوتے ہیںاور دوسروں کی مخالفت کی پرواہ نہیں کرتے۔

وہ وقت جب صدام حسین نے اپنے خون سے قرآن پاک لکھوایا، ایک انتہائی عجیب و غریب واقعہ

ارانگو کو جب امریکی صدر باراک اوباما کے کولہوں کی تصویر دکھائی گئی تو ان کا کہنا تھا کہ صدر کے دائیں کولہے کے مطالعے سے پتا چلتا ہے کہ وہ گھریلو مسائل سے پریشان ہیں۔ وہ آنے والے دنوں میں کسی بیماری میں بھی مبتلاءہو سکتے ہیں جو عالمی پیمانے پر بڑی خبر بن سکتی ہے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ صدر اوباما کے کولہوں کے مجموعی مطالعے کی بناءپر کہا جا سکتا ہے کہ وہ بطور انسان بہت ہی اچھے ہیں اور ایک شاندار شخصیت کے مالک ہیں۔ارانگو اپنے دلچسپ علم کو Rumpology کا نام دیتی ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ یہ خاصی حد تک ایک سائنسی علم ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس