قومی کرکٹ کی تاریخ کا آج شانداردن، شائقین سٹیڈیم آکر اسے یاد گار بنادیں، قومی کرکٹرز 

    قومی کرکٹ کی تاریخ کا آج شانداردن، شائقین سٹیڈیم آکر اسے یاد گار بنادیں، ...

  

لاہور(سپورٹس رپورٹر)سری لنکا کی کرکٹ ٹیم کے پاکستان آنے اور ملک میں انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی پر نائب کپتان بابر اعظم ملک میں انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی پر بے حد خوش ہیں جبکہ انہوں نے کہا ہے کہ جمعے کا دن میری زندگی کا بہت بڑا دن ہوگا۔کیونکہ میں اس دن فیلڈ میں پاکستان کے نائب کپتان کی حیثیت سے اتروں گا، میں چاہتا ہوں کہ اس دن نیشنل اسٹیڈیم میں موجود ہزاروں کرکٹ مداحوں کی طرح ملک بھر سے لوگ اس میچ کو دیکھیں اور اس تاریخی دن کو یادگار بنائیں۔بابر اعظم کے علاوہ پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے کہا جمعے کو تاریخ رقم ہوگی جب کراچی 2009کے بعد اپنی پہلی سیریز کی میزبانی کرے گا۔کپتان نے کرکٹ شائقین سے درخواست کی کہ وہ اس تاریخی دن کا حصہ بنیں تاکہ اپنی آنے والی نسلوں کو بتا سکیں کہ جب یہاں بین الاقوامی سیریز کھیلی گئی تو ہم موجود تھے۔پاکستانی پیسر وہاب ریاض نے بھی کہا کے شائقین کرکٹ سے اپیل کی کہ وہ کثیر تعداد میں میدان کا رخ کریں تاکہ دنیا میں ہمارا مثبت امیج پہنچے۔سابق کھلاڑی اور کمنٹیٹر رمیز راجہ نے کہا ہے کہ سری لنکا کے خلاف سیریز قومی کھلاڑیوں کے اعتماد کی بحالی کیلئے ضروری تھی۔ رمیز راجہ کے مطابق یہی وقت ہے قومی ٹیم دفاعی سوچ سے نکل کرا نڈر کرکٹ کھیلے اور مختلف شاٹس اور ورائٹی کا استعمال کرے۔انہوں نے کہا کہ ہم اس وقت تک ایک بہترین ٹیم نہیں بن سکتے جب تک مختلف سوچ کے ساتھ جارحانہ کرکٹ نہیں کھیلیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ سری لنکا کی پاکستان آنے والی ٹیم اوسط درجے کی ہے اس لئے قومی ٹیم کو اس کا دبا لینے کی ضرورت نہیں جبکہ سابق کپتان محمد یوسف کا کہنا ہے کہ مصباح الحق کے بجائے وقاریونس کو ہیڈکوچ اور چیف سلیکٹر کے اختیارات دیئے جاتے تویقین آتا کہ میرٹ پر فیصلہ ہوا ہے۔محمد یوسف نے سری لنکن ٹیم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ان کے برے حالات میں پاکستان نے بھی ان کا بھرپور ساتھ دیا تھا، پاکستان سری لنکا کے خلاف آسانی سے سیریز جیتے گا 

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -