6نکا ت پر عملدر آمد کیلئے حکومت کو 3ماہ کی آخری ڈیڈ لائن دے سکتے ہیں: اختر مینگل 

    6نکا ت پر عملدر آمد کیلئے حکومت کو 3ماہ کی آخری ڈیڈ لائن دے سکتے ہیں: اختر ...

  

کوئٹہ(آن لائن)بلوچستان نیشنل پارٹی کے سربراہ رکن قومی اسمبلی سردار اختر جان مینگل نے کہا ہے کہ چھ نکات پر عملدرآمد کیلئے حکومت کو تین ماہ کی آخری ڈیڈ لائن دے سکتے ہیں اگر سنجیدگی کامظاہرہ نہ کیاگیا توفیصلے میں آزاد ہیں سودے بازی کاالزام سیاسی شکست خوردہ لوگ لگارہے ہیں اگر میرے چارووٹوں سے بلوچستان کے 400گھرانوں میں خوشی آتی ہے تویہ گھاٹے کا سودا نہیں اب تک بلوچستان کے 90فیصد مسائل جوں کے توں ہیں جس سے میں خودمطمئن نہیں تو اہل بلوچستان کو کیا مطمئن کروں گا اپوزیشن جماعتیں ہمارے مطالبات کو تسلیم کرتے ہوئے یہ یقین دہانی کرائیں کہ اقتدار کے آنے کے بعدوہ بلوچستان کو دریائے نیل میں نہیں پھینکیں گے ہم چلتی گاڑی کے مسافر نہیں بننا چاہتے بلوچستان کا موسم اسلام آباد سے بدلتا ہے حکومت بنانے یا گرانے کی سیاست کبھی نہیں کی جوبھی بلوچستان کو اہمیت دے گا ہم اسے اہمیت دینگے۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے نجی ٹی وی سے گفتگو کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے ہم سے جو معاہدے کئے ان پر مکمل عملدرآمد تو نہیں ہوا تاہم اس طرزپرکام بھی نہیں ہوا جس کی ہمیں امید تھی بلوچستان میں لاپتہ افراد کامسئلہ تاحال حل طلب ہے اور اس کے لئے بہت بے چینی پائی جاتی ہے اس مسئلے کی ذمہ داری صرف موجودہ حکومت پر ہی نہیں بلکہ پاکستان پیپلز پارٹی اور پاکستان مسلم لیگ(ن)کی حکومتیں بھی اس کے ذمہ دار ہیں موجودہ حکومت نے ترقیاتی منصوبوں،بے روزگارکے خاتمے،بلوچستان میں پانی کے مسائل کے حل،ڈیمز کی تعمیر کے حوالے سے جومعاہدے کئے تھے اس پر صرف5 سے 10ہی عملدرآمد ہوا ہے ہمیں ایسا محسوس ہورہا ہے کہ یاتو حکومت مطالبات پر عملدرآمد میں سنجیدہ نہیں یاپھر ان کے مصروفیات زیادہ ہیں۔

اختر مینگل

مزید :

صفحہ آخر -