بابا ئے جمہوریت نوابزادہ نصراللہ خان کی 16ویں برسی پر دعائیہ تقریب

  بابا ئے جمہوریت نوابزادہ نصراللہ خان کی 16ویں برسی پر دعائیہ تقریب

  

مظفرگڑھ(نامہ نگار) بابائے جمہوریت،مجاہد ختم نبوت نوابزادہ نصراللہ خان مرحوم کی 16 برسی ملک بھر میں منائی گئی. اس سلسلے میں مقامی میرج ہال خان گڑھ میں خصوصی دعائیہ تقریب منعقد ہوئی. جس سے خطاب کرتے ہوئے تحریک انصاف کے ممبر صوبائی اسمبلی اور مرحوم کے صاحبزادے نوابزادہ منصور احمد خان نے کہا کہ نوابزادہ نصراللہ خان وطن عزیز کے پکے نظریاتی اور مخلص سیاستدان تھے.جنہوں نے وقت کے آمروں سے ٹکر لی۔ مجلس احرار کے پلیٹ فارم سے برصغیر کی آزادی کے لئے جدوجہد میں (بقیہ نمبر36صفحہ12پر)

بھرپور حصہ لیا۔ نوابزادہ نصراللہ خان آخری سانس تک آمروں سے نبرد آزما رہے.انکی زندگی کی آخری اور شاندار جدوجہد جنرل مشرف کی آمریت کے خلاف تھی۔ سیاسی بصیرت، دانائی، حکمت اور سیاسی کرشمہ سازی ہی تھی کہ جسکی وجہ سے وہ ہرمرتبہ ان منتشر اور متحارب سیاسی قوتوں کو متحد کرکے انہیں آمریت کے خلاف ایک طاقت بنانے میں کامیاب ہو جاتے۔ ان کا تعلق سیاستدانوں کے اس قبیلہ سے تھا جن پر کرپشن سے دور دور تک کا کوئی واسطہ نہیں وہ بے داغ شخصیت کے مالک تھے۔ نوابزادہ نصراللہ خان کو کشمیر سے انتہائی لگاؤ تھا. انہوں نے کشمیر کاز کے لئے بے حد کام کیا اور پہلی بار کشمیر کمیٹی کو فعال اور متحرک کیا. وہ علمائے کرام سے بے انتہاء محبت وعقیدت رکھتے تھے.انہوں نے کہا کہ بلاشبہ نوابزادہ نصراللہ خان سیاست میں رول ماڈل ہیں انکی خدمات کو فراموش نہیں کیا جاسکتا۔تقریب میں ایم این اے نوابزادہ افتخار احمد خان, نوابزادہ اسرار احمد خان, نوابزادہ محمد احمد خان, نوابزادہ محمد بلال خان, سیف اللہ خان, رانا امجد علی امجد ایڈووکیٹ, ملک نذیر سندیلہ, عرفان اللہ خان, ملک اقبال حسین, حاجی بشیر احمد, رانا واجد علی ایڈووکیٹ, میاں منظور احمد بھٹی, وقاص ہمایوں خان, نوابزادہ ساجد محمود خان, فضل محمود خان, شہباز احمد خان ایڈووکیٹ, سمیت ان کے عقیدت مندوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی. جبکہ اس موقع پر ملکی ترقی, خوشحالی اور کشمیریوں کی آزادی کے لئے بھی خصوصی دعا کی گئی.

بابائے جمہوریت

مزید :

ملتان صفحہ آخر -