جلیل شرقپوری کو نواز شریف کا بیانیہ مسترد کرنے کی سزا دے دی گئی ، پارٹی  رکنیت معطل 

جلیل شرقپوری کو نواز شریف کا بیانیہ مسترد کرنے کی سزا دے دی گئی ، پارٹی  ...
جلیل شرقپوری کو نواز شریف کا بیانیہ مسترد کرنے کی سزا دے دی گئی ، پارٹی  رکنیت معطل 

  

 لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن کے رکن پنجاب اسمبلی جلیل شرقپوری نے نواز شریف کا بیانیہ مسترد کر دیا جس کے بعد ن لیگ کی طرف سے لیگی ایم پی اے کی رکنیت معطل کر دی گئی۔

نجی ٹی وی "ابتک نیوز "کے مطابق مسلم لیگ ن پنجاب کے صدر رانا ثناء اللہ کی ہدایت پر ن لیگی ایم پی اے میاں جلیل احمد شرقپوری کو شوکاز نوٹس جاری کرتے ہوئے ان کی پارٹی رکنیت معطل کردی ہے۔سابق وزیراعظم کی طرف سے اے پی سی میں پاک فوج مخالف تقریر کرنے پر جلیل شرقپوری نے میاں نواز شریف پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ان کی حالیہ اے پی سی میں پاک فوج مخالف تقریر قومی مفاد کے سراسر خلاف ہے، مجھ سمیت محب الوطن پاکستانیوں کی کثیر تعداد ایسے منفی موقف سے اعلان برات کرتی ہے ،افواجِ پاکستان ملکی سلامتی کی خاطر سرحدوں پر اپنا تن، من، دھن قربان کرنے پر تیار ہیں۔لیگی ایم پی اے کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ (ن) فوج پر نواز شریف کی جانب سے سیاسی معاملات میں مداخلت کا بیان دشمن کو مضبوط کرنے کے مترادف ہے۔ ن لیگی قیادت نے اے پی سی کے فورم اور سوشل میڈیا کے ذریعے انڈیا اور مودی کی زبان بولی۔ ایسے ملک دشمن بیانات سے میرا اور دیگر کئی ن لیگی ارکانِ کا کوئی تعلق نہیں۔

دوسری طرف پاکستان مسلم لیگ ن نے ایم پی اے جلیل شرقپوری کی رکنیت معطل کرتے ہوئے ان سے سات روز میں جواب طلب کر لیا ہے، اگر جواب جمع نہ کرایا گیا تو الیکشن کمیشن سے رجوع کیا جائے گا اور ان کے خلاف ریفرنس دائر کیا جائے گا۔مسلم لیگ ن پنجاب کے صدر رانا ثناء اللہ کی ہدایت پر صوبائی جنرل سیکرٹری اویس لغاری نے جلیل شرقپوری کو شوکاز نوٹس جاری کیا ۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -