رنگ رلیاں مناتا جوڑا رنگے ہاتھوں پکڑا گیا، لوگ انہیں اپنے گاؤں میں لے گئے ، پھر 16 گھنٹے تک کیا کچھ کرتے رہے ؟

رنگ رلیاں مناتا جوڑا رنگے ہاتھوں پکڑا گیا، لوگ انہیں اپنے گاؤں میں لے گئے ، ...
رنگ رلیاں مناتا جوڑا رنگے ہاتھوں پکڑا گیا، لوگ انہیں اپنے گاؤں میں لے گئے ، پھر 16 گھنٹے تک کیا کچھ کرتے رہے ؟

  

رانچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست جھاڑ کھنڈ میں قابل اعتراض حالت میں ملنے والے "پریمی جوڑے" کو اہل علاقہ نے 16 گھنٹے تک یرغمال بنائے رکھا، پولیس نے بڑی ہی مشکل سے ان کی جان چھڑائی۔

بھارتی ٹی وی نیوز 18 کے مطابق صاحب گنج کے علاقے میں ایک شادی شدہ خاتون اپنے عاشق کے ساتھ کھیتوں میں "رنگ رلیاں" منارہی تھی ، اہل دیہہ نے انہیں رنگے ہاتھوں پکڑ لیا اور گاؤں میں لے آئے۔ گاؤں میں دونوں کو جوتوں کے ہار پہنا کر گھمایا گیا جس کے بعد پنچایت نے نوجوان کو 5 لاکھ روپے کا جرمانہ عائد کردیا۔ 

اہل دیہہ نے اس پر بھی ان کی جان نہیں چھوڑی اور انہیں باندھ دیا، اس دوران خاتون کے ساتھ چھیڑ چھاڑ بھی کی گئی۔ علاقہ مکینوں نے جوڑے کو 16 گھنٹے تک یرغمال بنائے رکھا اور اس دوران ان کی ویڈیوز بنا کر سوشل میڈیا پر شیئر کرتے رہے۔ پولیس کو اطلاع ملی تو اہلکاروں نے گاؤں میں پہنچ کر بڑی مشکل سے ان کی جان بخشی کرائی۔ پولیس کا کہنا ہے کہ اس معاملے میں مقدمہ درج کرکے مزید تحقیقات شروع کردی گئی ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -جرم و انصاف -