گوادر کی میرین ڈرائیو پر نصب بانی پاکستان کا مجسمہ تباہ کر دیا گیا

گوادر کی میرین ڈرائیو پر نصب بانی پاکستان کا مجسمہ تباہ کر دیا گیا
گوادر کی میرین ڈرائیو پر نصب بانی پاکستان کا مجسمہ تباہ کر دیا گیا

  

گوادر (ڈیلی پاکستان آن لائن)  بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح کے مجسمے کو دھماکہ خیز مواد سے تباہ کر دیا گیا جس کی   ڈی پی او گوادر نے واقعے کی تصدیق کر دی ۔پنجاب کے وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے بھی  قائداعظمؒ کے مجسمے کی بے حرمتی کے افسوسناک واقعہ کی شدید مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ مجسمے کی بے حرمتی پر ہرپاکستانی افسردہ ہے، یہ افسوسناک واقعہ نظریہ پاکستان پر حملے کے مترادف ہے۔

بی بی سی سے گفتگو کرتے ہوئے  ڈپٹی کمشنر گوادر میجر ریٹائرڈ عبدالکبیر خان زرکون نے بتایا کہ اتوار کی صبح دھماکے سے بانی پاکستان محمد علی جناحؒ کے مجسمے کو تباہ کیا گیا،  شر پسند عناصر سیاح بن کر علاقے میں آئے تھے ۔ڈی سی گوادر کے مطابق ابھی تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی تاہم ایک دو روز میں تحقیقات مکمل کر کے کارروائی عمل میں آئے گی۔معاملے کے ہر پہلو کو دیکھ رہے ہیں اور جلد ملزمان گرفت میں ہوں گے ۔

وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے واقعے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ   قائداعظمؒ سے منسوب ہر یادگار پاکستانیوں کو جان سے پیاری ہے، بانی پاکستان کے مجسمے کے بے حرمتی کرنے والے عناصر کسی رعایت کے مستحق نہیں۔سردار عثمان بزدار نے کہا کہ  یہ قابل مذمت واقعہ پاکستان کی یکجہتی کو نقصان پہنچانے کی کوشش ہے، واقعہ میں ملوث عناصر کڑی سزا کے حقدار ہیں، قائد اعظم محمد علی جناحؒ کا احسان ہم تا قیامت نہیں اتار سکتے ۔

واقعے کا مقدمہ کاؤنٹرر ٹیررازم ڈپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی)  تھانہ گوادر میں درج کیا گیاہے ،سی ٹی ڈی حکام کے مطابق مقدمے میں سیون اے ٹی اے اور ایکسپلوسیو ایکٹ سمیت دیگر دفعات شامل کی گئی ہیں۔

مزید :

اہم خبریں -