اوکاڑہ میں گھریلو ملازمہ کو رکشہ ڈائیور اور اس کے ساتھیوں نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

اوکاڑہ میں گھریلو ملازمہ کو رکشہ ڈائیور اور اس کے ساتھیوں نے اجتماعی زیادتی ...
اوکاڑہ میں گھریلو ملازمہ کو رکشہ ڈائیور اور اس کے ساتھیوں نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

  

اوکاڑہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) حجرہ شاہ مقیم کے علاقہ میں لاہور سے اوکاڑہ آنے والی 19سالہ گھریلو ملازمہ کو رکشہ ڈرائیور نے اپنے ساتھیوں کے ہمراہ زیادتی کا نشانہ بناڈالا۔

تھانہ حجرہ شاہ مقیم میں درج مقدمہ کے مطابق ایف آئی آر زیادتی کا نشانہ بننے والی لڑکی کے والد کے بیان پر درج کی گئی ہے۔ لڑکی لاہور میں میاں خرم نامی شہری کے گھر ملازمہ تھی۔ وقوعہ کے روز  وہ لاہور سے اوکاڑہ پہنچی ،جہاں سے اس نے گھر جانے کے لیے رکشہ کرایہ پر لیا۔اس دوران  رکشہ ڈرائیور  ذیشان عرف شانی نے گھر پہنچانے کے بجائے  اسے ایک زمیندار کے ڈیرے پر لے گیا، اور وہاں پہلے خود زیادتی کی، اور پھر اس کے دیگر  دو ساتھی باری باری زیادتی کا نشانہ بناتے رہے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق میڈیکل رپورٹ میں لڑکی کے ساتھ زیادتی ثابت ہوگئی ہے،پولیس نے تینوں  ملزمان کو گرفتار کرلیا ہے۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -اوکاڑہ -