برطانیہ کی تاریخ میں ہیرے جواہرات کی سب سے بڑی چوری ،محفوط ترین عمارت میں چور کیسے داخل ہوئے ؟جان کر آپ بھی چکرا جائیں گے

برطانیہ کی تاریخ میں ہیرے جواہرات کی سب سے بڑی چوری ،محفوط ترین عمارت میں چور ...
برطانیہ کی تاریخ میں ہیرے جواہرات کی سب سے بڑی چوری ،محفوط ترین عمارت میں چور کیسے داخل ہوئے ؟جان کر آپ بھی چکرا جائیں گے

  


لندن (نیوز ڈیسک) برطانیہ کی تاریخ میں زیورات کی سب سے بڑی چوریوں میں سے ایک کی تفصیلات میٹرو پولیٹن پولیس نے تصاویر کے ساتھ جاری کردی ہیں۔

پولیس کے مطابق ایسٹر کی چھٹیوں کے موقع پر ہیٹن گارڈن سیف ڈیپازٹ میں کی جانے والی 30 کروڑ ڈالر (تقریباً 30ارب پاکستانی روپے) کی چوری میں ناقابل یقین حد تک طاقتور اوزار اور پیچیدہ منصوبہ بندی استعمال کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق سات چوروں کا گینگ ایک بغلی دروازے سے عمارت میں داخل ہوا اور پھر ایک لفٹ کو ناکارہ بنا کر اس کی شافٹ کے ذریعے تجوریوں والے کمرے کے سامنے پہنچے۔ ایڈوانس ٹیکنالوجی سے لیس چوروں نے حیرت انگیز طاقت والی ڈرل مشین سے کنکریٹ کی کئی فٹ چوڑی دیوار میں بڑے بڑے سوراخ کئے اور ایک انسان کے گزرنے کے لئے جگہ بنا کر اندر داخل ہوگئے۔ تجوریوں کے سامنے لگی ہوئی سٹیل کی مضبوط سلاخوں کو بھی کاٹ کر موڑ دیا گیا۔ نامعلوم طریقے سے تجوریوں کو کھول کر ان میں سے سونا اور ہیرے جواہرات نکال کر چور باہر آئے جہاں ایک گاڑی پہلے سے ان کی منتظر تھی۔ پولیس کا کہنا ہے کہ یہ چوری برطانیہ کی محفوظ ترین اور مضبوط ترین جگہوں میں سے ایک پر کی گئی جس کی کوئی دوسری مثال نظر نہیں آتی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس