سزائے موت پانے والے مجرموں کی سزا کے خلاف اپیلیں خارج

سزائے موت پانے والے مجرموں کی سزا کے خلاف اپیلیں خارج

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ نے اغواء برائے تاوان اور قتل کے مقدمہ میں 2،2مرتبہ سزائے موت پانے والے مجرموں کی سزا کے خلاف اپیلیں خارج کر دیں، مسٹر جسٹس مظاہرعلی اکبر نقوی اور مسٹر جسٹس مظہراقبال سدھوپر مشتمل دورکنی بنچ نے اپیل کنندگان تصدق حسین اور محمدسلیم کی درخواست پرسماعت کی،اپیل کنندگان نے جناح روڈ گوجرانوالہ کے علاقہ میں اکتوبر 2008میں 5 سالہ بچے کو تاوان کے لئے اغواء کر کے قتل کردیا تھا ۔انسداد دہشت گردی کی عدالت نے 2009ء میں انہیں 2،2بارسزائے موت اور مجموعی طور پر 12 لاکھ روپے جرمانے کا حکم سنایا تھا،ڈپٹی پراسکیوٹرجنرل منیراحمد سیال نے بنچ کو بتایا کہ مجرموں نے پانچ سالہ عمر فاروق کو اغواء کرنے کے بعد تاوان وصول کیا اور بعد میں کم سن کو قتل کر دیا، ان کے قبضے سے 9 لاکھ روپے تاوان کی رقم بھی برآمد کی گئی ۔

مزید : علاقائی