والدین کے ہراساں کرنے پر2 لڑکیاں سیشن عدالت پہنچ گئیں

والدین کے ہراساں کرنے پر2 لڑکیاں سیشن عدالت پہنچ گئیں

لاہور(نامہ نگار)پسند کی شادی کرنے والی 2لڑکیاں والدین اور پولیس کی جانب سے ہراساں کئے جانے پر سیشن عدالت پہنچ گئیں ۔ایڈیشنل سیشن جج نے متعلقہ تھانوں کے ایس ایچ او کو شادی شدہ جوڑوں کو ہراساں نہ کرے کا حکم دیتے ہوئے دائر درخواستیں نمٹا دیں۔   عدالت میں درخو است گزار ناصرہ نے موقف اختیار کیا کہ اس نے اعظم کے ساتھ جبکہ ثمرین نے موقف اختیار کیا کہ اس نے ظہورکے ساتھ پسند کی شادی کی ہے،درخواست گزار وں کا کہنا تھا کہ پسند کی شادیاں کرنے کی وجہ سے ان کے والدین ودیگر رشتے دار اس رشتہ سے خوش نہیں ہیں اور اسی وجہ سے وہ انہیں مقامی پولیس سے مل کر مختلف ہیلوں بہانوں سے تنگ کرنے کررہے ہیں اور انہیں اپنے شوہروں سے علیحدگی اختیار کرنے پر مجبور کیا جارہا ہے ،عدالت سے استدعا ہے کہ قانون کے مطابق کارروائی کا حکم دیا جائے جس پ عدالت نے مذکورہ بالا احکامات جاری کردیئے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4