راولپنڈی کے قریب گوگل اور ایپل کی لڑائی کروانے والے شخص کا پتا چل گیا

راولپنڈی کے قریب گوگل اور ایپل کی لڑائی کروانے والے شخص کا پتا چل گیا
راولپنڈی کے قریب گوگل اور ایپل کی لڑائی کروانے والے شخص کا پتا چل گیا

  


سان فرانسسکو (نیوز ڈیسک)جمعہ کے روز گوگل میپس میں ظاہر ہونے والی متنازعہ تصویر نے سب کی توجہ کھینچ لی اور ہر کوئی سوال کررہا تھا کہ یہ تصویر گوگل میپس میں کس نے اور کس طرح داخل کی۔ اس میں اینڈرائیڈ کا لوگو ایپل کے سیب نما لوگو پر پیشاب کرتا نظر آیا اور اہم سوال یہ تھا کہ گوگل نے اس تصویر کی منظوری کیسے دی؟

فیس بک میں کونسی نئی تبدیلی آنے والی ہے ، جاننے کے لیے کلک کریں

اب ٹوئٹر صارف Michael Burgstahlerنے انکشاف کیا ہے کہ یہ شرارت Nitricboyکا یوزر نیم استعمال کرنے والے انٹرنیٹ صارف نے کی اور اس نے متنازعہ تصویر مختلف ٹکڑوں میں یوں اپ لوڈ کی کہ گوگل کو اس کے شیطانی ارادے کی بالکل سمجھ نہ آسکی۔ گوگل کے میپ میکر سوفٹ ویئر میں کی گئی ایڈیٹنگ ظاہر کرتی ہے کہ مشکوک صارف نے پہلے ”پارک“ کے نام سے کچھ تصاویر اپ لوڈ کیں اور پھر ”واٹر“ کے نام سے مزید تصاویر اپ لوڈ کیں۔ ان تصاویر میں بظاہر پودوں ‘پانی اور سیب کے خاکے نظر آرہے تھے مگر جب یہ تصاویر اکٹھی ہوئیں تو ایپل کے لوگو (سیب) پر اینڈرائیڈ کا لوگو (ایک روبوٹ) پیشاب کرتا نظر آرہا تھا۔

انٹر نیٹ پر تہلکہ مچانے اور گوگل کیلئے شرمندگی کا باعث بننے والے صارف کا یوزرنیم اور طریقہ واردات تو معلوم ہوگیا ہے البتہ اس کے متعلق دیگر معلومات تاحال دستیاب نہیں ہیں۔

مزید : قومی