وہ کھانے جوہر گز فریج میں نہیں رکھنے چاہیے

وہ کھانے جوہر گز فریج میں نہیں رکھنے چاہیے
وہ کھانے جوہر گز فریج میں نہیں رکھنے چاہیے

  


لندن(نیوزڈیسک)کھانوں کو ریفریجریٹر میں رکھ کر ہم زیادہ عرصہ تک استعمال کر سکتے ہیں اور ساتھ یہ بھی سمجھتے ہیں کہ وہ محفوظ ہوگئے ہیں لیکن کچھ کھانے ایسے بھی ہیں جنہیں ہرگز فریج میں نہیں رکھنا چاہیئے۔آئیے آپ کو چند ایسے کھانوں کے بارے میں بتاتے ہیں۔

بریڈ

اگر آپ بریڈ کو فریج میں رکھیں گے تو اس کے اندر کی نمی ختم ہوجائے گی اور اس میں نرمی کم ہوجائے گی۔خشک بریڈ کھانے سے آپ کو مشکل ہی نہیں بلکہ مزہ بھی نہیںآئے گا۔آپ چاہیں تو بریڈ کو فریزر میں رکھ کر زیادہ عرصے کے لئے محفوظ بنا سکتے ہیں۔

آلو

آلوﺅں کو فریج میں رکھنے سے ان کی غزائیت اور ذائقے میں واضح فرق آجاتا ہے لہذا انہیں کبھی بھی فریج میں مت رکھیں۔

کچھ پھل

سیب، کیلا، سٹرس فروٹس،آڑو،خوبانی اور بیریز کو فریج میں رکھنے سے ان کاذائقہ اور رنگ خراب ہوجاتا ہے لہذا انہیں باہر رکھنا بہتر ہے۔اگر آپ چاہیں تو کھانے سے آدھ گھنٹہ قبل ان پھلوں کو فریج میں رکھ کر ٹھنڈا کرسکتے ہیں ۔

پیاز

پیاز کو زیادہ عرصے تک محفوظ رکھنے کے لئے انہیں کاغذکے بیگ میں اندھیرے میں رکھیں۔انہیں فریج اور آلوﺅں کے پاس ہر گز سٹور مت کریں۔ آلو ایک خاص قسم کی نمی اور گیس کا اخراج کرتے ہیں جس کی وجہ سے پیاز جلد خراب ہوجاتا ہے۔

ٹماٹر

عام طور پر ٹماٹر کو فریج میں رکھا جاتا ہے لیکن اس سے ٹماٹر کا ذائقہ خراب ہوجاتا ہے۔گو کہ ٹماٹر محفوظ ہوجاتا ہے لیکن اس کا ذائقہ بدل جاتا ہے۔آپ چاہیں تو ٹماٹر کو لمبا عرصہ استعمال کرنے کے لئے اسے فریزر میں رکھ دیں۔اس طرح محفوظ کیا گیا ٹماٹر ایک ماہ تک استعمال کیا جاسکتا ہے۔

کافی

کافی کو ائیر ٹائیٹ جار میں رکھنا زیادہ بہتر ہے۔اگر اسے فریج میں رکھ دیا جائے تو اس میں نمی داخل ہونے سے نہ صرف کافی بدمزہ ہوجائے گی بلکہ یہ خراب بھی ہوسکتی ہے۔

اچار

اچار کو باہر رکھا جائے تب بھی وہ خراب نہیں ہوتا لیکن فریج میں رکھنے سے اس کی خوشبو تمام فریج میں پھیل جائے گی اور دیگر کھانوں میں بھی چلی جائے گی جس سے آپ کو کافی دقت پیش آئے گی۔

خربوزے

اگر خربوزے کو فریج میں زیادہ عرصہ رکھا جائے تو وہ بالکل خستہ ہوکر ٹوٹنے لگتے ہیں لہذا ضروری ہے کہ کھانے سے قبل کچھ دیر تک انہیں فریج میں رکھتے ہی کھا لیا جائے۔

شہد

اگر آپ شہد کو فریج میں رکھیں تو وہ سخت بھی ہوسکتا ہے جس سے اس کے ذائقے میں خرابی کا امکان ہے۔خالص شہد کو اگر کمرے کے درجہ حرارت پر رکھا جائے تو وہ کبھی بھی خراب نہیں ہوتا۔

لہسن

فریج میں لہسن رکھنے سے نہ صرف اس کی عمر کم ہوجاتی ہے بلکہ اس کا ذائقہ بھی تبدیل ہوجاتا ہے۔اسے بھی پیاز کی طرح روشنی سے دور رکھنا چاہیے۔

مصالحہ جات

اگر سرخ،کالی مرچوں اور ہلدی و دیگر مصالحہ جات کو فریج میں رکھا جائے تو نمی سے ان کے خراب ہونے کے امکانات زیادہ ہیں لہذا انہیں خشک جگہ پر رکھ کر استعمال کریں۔

مزید : تعلیم و صحت