نوجوانوں کو شرمناک کام پر اکسانے کے الزام میں ایرانی جریدے پر پابندی عائد

نوجوانوں کو شرمناک کام پر اکسانے کے الزام میں ایرانی جریدے پر پابندی عائد
نوجوانوں کو شرمناک کام پر اکسانے کے الزام میں ایرانی جریدے پر پابندی عائد

  


تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)ایران میں ”سفید شادی“ کی حوصلہ افزائی کے جرم کا مرتکب قرار دے کر خواتین کے ایک اہم جریدے پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

برطانوی اخبار ”دی گارڈین“ کے مطابق خواتین کے میگزین ”زنانِ امروز“ نے گزشتہ سال ایک خصوصی مضمون شائع کیا تھا جس میں نکاح کے بغیر بطور میاں بیوی زندگی گزارنے کے رجحان کے مختلف پہلوﺅں پر بحث کی گئی تھی۔ اس مضمون میں شرعی تعلق کے بغیر ازدواجی رشتے کو ”سفید شادی“ کا نام دیا گیا اور ایران میں غیر شادی شدہ جوڑوں کی قابل ذکر تعداد میں اس قسم کے تعلق کے رجحان پر تفصیلاً بات کی گئی تھی۔ ایرانی اخبار "Shargh"کے مطابق پریس کی نگرانی کرنے والے سرکاری ادارے نے میگزین کو”سفید شادی“ کی حوصلہ افزائی کرنے اور اس کی توجیح پیش کرنے کا مرتکب قرار دیا جس کے بعد عدالت نے میگزین کی پابندی کا حکم جاری کردیا ۔

 ایرانی وزارت برائے امور نوجوانا ں وکھیل اس سے پہلے میڈیا کو ”سفید شادی“ میں بڑھتی ہوئی دلچسپی کا ذمہ دار قرار دے چکی ہے جبکہ گزشتہ سال ایرانی سپریم لیڈر کے دفتر کی طرف سے اس رجحان کے خلاف کاروائی کا حکم بھی دیا جاچکاہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس