وہ ایک چیز جو ہم بہت شوق سے استعمال کرتے ہیں کینسر کیلئے غذاء کا درجہ رکھتی ہے، چھٹکارا حاصل کریں اور محفوظ رہیے

وہ ایک چیز جو ہم بہت شوق سے استعمال کرتے ہیں کینسر کیلئے غذاء کا درجہ رکھتی ...
وہ ایک چیز جو ہم بہت شوق سے استعمال کرتے ہیں کینسر کیلئے غذاء کا درجہ رکھتی ہے، چھٹکارا حاصل کریں اور محفوظ رہیے

  

ٹوکیو(نیوزڈیسک) کینسر ایک جان لیوا مرض ہے اوراس میں مبتلا افراد کی زندگی اذیت ناک ہوجاتی ہے۔اس کے لاحق ہونے کی کئی وجوہات بیان کی جاتی ہیں لیکن حال ہی میں سائنسدانوں نے کہا ہے کہ چینی ایک ایسی چیز ہے جو کینسر کے لئے غذا مہیا کرتی ہے۔

Journal of Clinical Investigationمیں شائع ہونے والی ایک جدید تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ کینسر کے خلیے ’ایئروبیک گلیکولائسس‘کی مدد سے توانائی خارج کرتے ہیں یعنی وہ چینی کو بطور غذاء استعمال کرتے ہوئے ایسا کرتے ہیں۔اس عمل کو ’Warburg effect‘کا نام دیا گیا ہے جو کہ ایک سائنسدان اوٹو واربرگ نے دریافت کیا تھا لیکن اس تھیوری کو متروک کردیا گیا۔اب ایک بار پھر سائنسدانوں نے اس پر کام شروع کیا تو اس بات میں صداقت ملی ہے۔جاپانی تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ جب ہمارے خلیوں کو زیادہ گلوکوز والی خوارک ملتی ہے تو ان میں ’ایئروبیک گلیکولائسس‘کا عمل تیز ہوجاتا ہے یعنی کینسر بننے کے امکانات بڑھ جاتے ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ اگر چینی کم میسر ہوتو یہ کینسر زدہ خلیے اپنی پہلی والی حالت میں لوٹنے لگتے ہیں۔اس تحقیق کے بعد سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ اس بات کی اشد ضرورت ہے کہ ہم اپنے کھانے پینے کی عادات کو کنٹرول کریں اور تمام ایسی چیزوں سے اجتناب کریں جن کی وجہ سے صحت کے سنگین مسائل پیداہوتے ہیں اور چینی ان میں سے سب سے زیادہ خطرناک چیز ہے جس کی وجہ سے ناصرف موٹاپے،دانتوں کی خرابی، دل کے امراض اور ذیابیطس لاحق ہوتے ہیں بلکہ یہ کینسر جیسی موذی مرض میں بھی مبتلا کرسکتی ہے۔

مزید :

تعلیم و صحت -