انسان کے جسم کا وہ حصہ جس کے سائز میں عمر بڑھنے کے ساتھ ساتھ ذرا بھی اضافہ نہیں ہوتا

انسان کے جسم کا وہ حصہ جس کے سائز میں عمر بڑھنے کے ساتھ ساتھ ذرا بھی اضافہ ...
انسان کے جسم کا وہ حصہ جس کے سائز میں عمر بڑھنے کے ساتھ ساتھ ذرا بھی اضافہ نہیں ہوتا

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) ہمارے جسم کا ہر عضو پیدائش سے لے کر ایک خاص عمر تک جسامت میں مسلسل بڑھتا رہتا ہے، لیکن قدرت نے ہمارے ایک عضو میںیہ خاصیت رکھی ہے کہ اس کی جسامت میں عمر بڑھنے کے ساتھ زرا بھی اضافہ نہیں ہوتا۔ ہمارے جسم کا یہ اہم عضو آنکھ ہے، جس کے بغیر زندگی کی رنگینی اور خوبصورتی کا تصور کوئی معنی نہیں رکھتا۔

نامور امریکی ماہر چشم ڈاکٹر مارک فرومر کا کہنا ہے کہ انسانی آنکھ کا اوسط قطر تقریباً ایک انچ ہوتا ہے اور ننھے بچوں سے لے کر جوانوں اور بوڑھوں تک سب کی آنکھوں کا اوسط سائز یہی ہوتا ہے۔ اگر آپ کو اس حیران کردینے والی بات پر یقین نہیں آرہا تو آپ کسی ننھے بچے کی آنکھوں اور اپنی آنکھوں کی جسامت کا موازنہ کرکے دیکھ لیجئے۔

دنیا کا پہلا ریسٹورنٹ جہاں کھانا کھانے کیلئے ننگا ہونا لازمی ہے

ڈاکٹر فرومر نے انسانی آنکھ کی کچھ اور دلچسپ باتیں بھی بیان کی ہیں، مثال کے طور پر ہمارے دماغ کی سب سے زیادہ قوت یعنی 65 فیصد صرف آنکھیں استعمال کرتی ہیں اور یہ دماغ کے بعد جسم کا طاقتور ترین عضو ہیں۔ تو اگر آپ اپنے دماغ کو بہترین طریقے سے استعمال کرنا چاہتے ہیں تو آپ کی آنکھیں بھی مکمل طور پر صحت مند ہونا چاہئیں، کیونکہ آنکھوں کی کمزوری کی صورت میں دماغ کی اضافی طاقت خرچ ہونا شروع ہوجائے گی۔ یہی وجہ ہے کہ طالب علموں کو خصوصی طور پر اپنی آنکھوں کی صحت کا خیال رکھنا چاہیے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -